PDA

View Full Version : میری پسندیدہ شاعری



صفحات : 1 [2]

  1. سرسبز چمن میرا ، اے بادِ صبا رکھنا
  2. ایک ہوتی تو دُکاں لے جاتا
  3. اَگلے وقتوں ، گئے زمانوں میں
  4. جانے کس لیے رُوٹھی ایسے زندگی ہم سے
  5. لمحۂ وصلِ آفتاب کہاں قطرۂ شبنمِ خراب کہاں
  6. چہرے پر وحشت سی ہے
  7. ایک غم ہے ، اُسے اپنا جانیں
  8. نشتروں پر جسم سارا رکھ دیا
  9. نام لکھو اس پر میرا
  10. رخصت اِک عہدِ جوانی ہی نہیں
  11. کوئی آگے ہے نہ پیچھے میرے
  12. میرے خون کے پیاسے ہوں گے لیکن لوگ جیالے تھے
  13. یہ کیسا کھیل ہے اب اُس سے بات بھی کر لوں
  14. سایہ آسماں کا ہے اِک یقیں گماں کا ہے
  15. کوئی بیمار پڑ جائے تو ا چھّا کیسے کرتے ہو
  16. اشک پلکوں کے کنارے تیرے
  17. کھڑکی کے پردوں پر کیسا سایہ ہے
  18. بازوئے شب میں سمٹنا میرا
  19. بس اِک رُوح کیا ہے ، بدن بھی تو ہے
  20. ریشم کا شاعر ; گلزارؔ
  21. پرورش میں اُن کی ہستی تک مٹا دیتی ہے ماں
  22. احمد فراز کو ہم سے بچھڑے چار سال ہوگئے
  23. میری شاعری
  24. ایک ہی شخص تھا
  25. میری پسندکی شاعری
  26. اٹھے نہ تھے ابھی ہم حالِ دل سنانے کو
  27. دورِ جہالت
  28. شعروں کے انتخاب نے رسوا کیا مجھے
  29. پیار بھی جنگ ہے رسوائی پہ رونا کیسا
  30. ایسے ہو جائیں گے ایسا تو کبھی سوچا نہ تھا
  31. اللہ رحیم ہے
  32. پچھتائو
  33. انتظار
  34. ظاہر و باطن
  35. آرزو
  36. زبان اللہ تعالی کی عنایت ہے
  37. زندگی کا سفر دن بدن کم ہو رہا ہے
  38. کائنات
  39. عطاءِ رزق
  40. ہو تیرے بیاباں کی ہوا تجھ کو گوارا
  41. کلامِ اقبال “آوازِ غیب
  42. کرم ہو آقا
  43. یاد الہی
  44. درازیِ عمر
  45. اللہ کا در
  46. قابلِ ستائش
  47. عظمتوں والا
  48. فرمانِ رسول صلی اللہ علیہ وسلم
  49. اُمتِ رسول صلی اللہ علیہ وسلم
  50. ابھی وقت ہے
  51. حکمِ اللہ
  52. بہت بے حس سی لڑکی ہے
  53. محبت میں جو رنجش ہو رہی ہے ۔۔۔ صفدر ہمدانی
  54. آ کے دیکھو تو کبھی تم میری ویرانی میں
  55. میں نے مِٹِّی سے مُحَبّت کا صِلہ مانگا تھا
  56. کسی فقیر کے قدموں کی خاک۔۔۔
  57. دالان میں کبھی کبھی چھت پر کھڑا ہوں میں
  58. کچھ نہیں مانگتا۔۔۔۔۔
  59. بولنے دو۔۔۔۔۔
  60. آؤ مل کر کھاتے ہیں ،
  61. میں باغی ہوں ۔
  62. ہم تیرے شہر میں آئے ہیں مسافر کی طرح
  63. ہم تو ہنستے ہیں دوسروں کو ھنسانے کی خاطر
  64. اگر زندگی صرف جذبات ہوگی
  65. گزر بسر میں زندگی کے دھارے ریت ہوگئے
  66. اسی جدوں دے عشق وِچ پے گئے آں
  67. پلکوں پہ کچی نیندوں کا رَس پھیلتا ہو جب
  68. مسجد کے زیرِ سایہ خرابات چائیے
  69. نگاہِ ناز کا حاصل ہے اعتبار مجھے
  70. عشق صوفیانہ
  71. اسی سے ہوتا ہے ظاہر جو حال درد کا ہے
  72. سُلگے ہُوئے من کو اب یہ کس نے ہوا دی ہے
  73. میں نظر سے پی رہا ہوں یہ سماں بدل نہ جائے
  74. تعلقات ابھی اس قدر نہ ٹُوٹے تھے
  75. اب کیا ہے جو تیرے پاس آؤں
  76. ہونٹوں پہ کبھی ان کے میرا نام ہی آئے
  77. لہو رونے سے ڈرتا ہوں جدا ہونے سے ڈرتا ہوں
  78. کیوں ہم سے خفا ہو گئے اے جانِ تمنا
  79. وہ ہمسفر تھا مگر اُس سے ہمنوائی نہ تھی
  80. مرے دل سے بوجھ اتار دو
  81. تو گزر گیا کسی موج میں، جسے توڑ کر میرے کوزہ گر
  82. قفسِ رنگ سے نکلےتو کدھر جائیں گے
  83. زندہ تو ہوں مگر زندگی سے دور ہوں میں
  84. سمندر پار ہوتی جا رہی ہے
  85. ہم نے اُنکے سامنے اوّل تو خنجر رکھدیا
  86. ٹوٹا ہے جب سے اس کی مسیحائی کا طلسم
  87. چراغ شب کو جیسے آندھیاں اچھی نہیں لگتیں
  88. میری تعریف کرے،،،،،، یا مجھے بدنام کرے,
  89. پروین شاکر صاحبہ کی ایک خوبصورت غزل
  90. دن بدن, روز روز, یوں کیسے؟
  91. ضروری تو نہیں
  92. تم اتنا جو مسکرا رہے ہو
  93. ہجومِ شہرِ یار سے نکلا، تو رو دیا
  94. میری اداسی
  95. اے شریکِ زندگی! اِس بات پر روتی ہے تُو
  96. چشم و ادا و غمزہ، شوخی و ناز، پانچوں
  97. بچھڑے تو قربتوں کی دعا بھی نہ کر سکے
  98. میری مٹی سے میرے خوابوں کے رشتے محکم کرنے کے لئے
  99. ﭘﮭﻮﻝ ﺗﮭﮯ ﺭﻧﮓ ﺗﮭﮯ ،ﻟﻤﺤﻮﮞ ﮐﯽ ﺻﺒﺎﺣﺖ ﮨﻢ ﺗﮭﮯ
  100. اک نام کی اُڑتی خوشبو میں اک خواب سفر میں رہتا ہے
  101. اک تلاطم میں ھوں شورش میں ھوں چکر میں ھوں
  102. وہ جو صُبحوں سی جبیں رکھتا ہے
  103. میں نے دیکھا تھا اُن دنوں میں اُسے
  104. جو تم اخلاص چاہوتو فرشتوں سے نباہ کر لو
  105. سُبُو اُٹھا کہ شبِ ماہتاب ہے ساقی
  106. کافر عشق ہوں میں بندہ اسلام نہیں
  107. کُچھ کشش دل بَروں میں ہے ہی نہیں
  108. آنکھ میں خواب نہیں، خواب کا ثانی بھی نہیں
  109. ایک ہی بارش برس رہی ہے چاروں جانب
  110. میخانے میں آ کر بھی وہی توبہ کی تلقین
  111. جگہ جی لگانے کی دنیا نہیں ہے
  112. اس نے ہنسی ہنسی میں محبت کی بات کی
  113. صحرا صحرا دوپہریں ہیں، بادل بادل شام
  114. گھڑی مڑی جی بھر آوندا اے
  115. سُن بھی اے نغمہ سنجِ کنجِ چمن اب سماعت کا اعتبار کسے
  116. لب پہ نہ لائے دل کی کوئی بات اسے سمجھا دینا
  117. ابھی اک شور سا اٹھا ھے کہیں
  118. نایاب ہیں ہم
  119. دیارِ شوق میں کب رتجگا نہیں ہوتا
  120. غمِ ہجراں کی ترے پاس دوا ہے کہ نہیں
  121. ﺳﻨﻮ ﺍﮮ ﻣﺤﺮﻡِ ﮨﺴﺘﯽ !
  122. ﻣﯿﮟ ﺧﻮﺩ ﺯﻣﯿﮟ ﮨﻮﮞ ﻣﮕﺮ ﻇﺮﻑ ﺁﺳﻤﺎﻥ ﮐﺎ ﮨﮯ
  123. تھکا دیا ہے تمھارے فراق نے مجھے
  124. اسرار الحق مجاز کا پیغام نوجوانوں کے نام
  125. چاند جلتا رہا
  126. آؤ آج اک سودا کرئیے
  127. ﺩﺷﻤﻨﻮﮞ ﻧﮯ ﺟﻮ ﺩﺷﻤﻨﯽ ﮐﯽ ﮨﮯ
  128. بابا جی ہم توڑ چکے ہیں کب کا پاکستان
  129. ﮐﯿﺎ ﮐﺮﮮ ﻣﯿﺮﯼ ﻣﺴﯿﺤﺎﺋﯽ ﺑﮭﯽ ﮐﺮﻧﮯ ﻭﺍﻻ
  130. قہر ہے موت ہے قضا ہے عشق
  131. عہدٍ وفا شغل ہے بیکار لوگوں کا
  132. شکستہ آئینوں کی کرچیاں اچھی نہیں لگتیں
  133. " ﺳﻔﺎﮎ ﺗﺎﺛﺮ "
  134. شک ۔ دلاور فگار
  135. اس درد کی دنیا ست گزر کیوں نہیں جاتے
  136. محبت پر بہت مغرور ہوں میں
  137. پھول ہوتا تو تیرے در پہ سجا بھی دیتا
  138. اس خون کی سرخی کہتی ھے
  139. الم تو یہ کہ دونوں کے مرغزاروں سے
  140. جب ہم کہیں نہ ہوں گے
  141. پردیس
  142. ایسی وحشت پہ میں قربان بھی ہو سکتا ہوں
  143. مگر اب چائے پیتا ہوں۔۔۔۔