PDA

View Full Version : حادثہ روز نیا واقعہ تھا روزوھی



گلاب خان
01-21-2011, 05:14 PM
حادثہ روز نیا واقعہ تھا روزوھی

زخم ھر لمحہ نئے درد ملا روزو ھی

وھی اک وصل کیخواھش کیلیے ہجر کی شام

وحشت جاں کے لیے حرف دعا روزو ھی

وھی اک شخص کی خاطر نئی بست کا پتہ

شکلیں ھر روز نئی راہ وفا روز وھی

ھر نئے روز نئی طرح سے زندہ رہنا

وحشتیں روز وھی درد ودوا روز وھی

وھی ھر شام سمندر کے کنارے تنہا

اور سناٹے میں پانی کی صدا روز وھی

وھی دیوانگی دل کے لیے ایک سفر

قافلہ روز نیا آپلہ پا روز وھی

روز جلنے کے لیے بجھتا رھا ایک دیا

اور ایک سمت سے آتی تھی ھوا روز وھی

آنکھ سے خواب تلک ھے وھی غم کا رستہ

کوششیں روز وھی قافلہ تھا روز وھی

دشت ھے آگ کا ور ھے وھی رستہ عادل

باغ میں یاد کے ھے پھول نیا روز وھی

تانیہ
01-21-2011, 11:58 PM
واہ.....

این اے ناصر
03-31-2012, 01:20 PM
واہ بہت خوب۔ شکریہ