PDA

View Full Version : بارش میں کبھی بھیگوگی تویاد آؤں گا



این اے ناصر
03-18-2011, 08:47 PM
ہم نے خوشیوں کی طرح دُکھ بھی اکٹھے دیکھے
صفحہ زیست کو پلٹو گی تو یاد آؤ ں گا
سردراتوں کے مہکتے ہوئے سناٹوں میں
جب کسی پھُول کوچومو گی تویاد آؤں گا
اب تویہ اشک بھی ہونٹوں سے چُرا لیتا ہوں
ہاتھ سے خود انہیں پونچھو گی تویادآؤں گا
شال پہنائے گااب کون دسمبر میں تمہیں
بارش میں کبھی بھیگوگی تویاد آؤں گا