PDA

View Full Version : اک بھیگی ہوئی سی رات ملے



این اے ناصر
03-18-2011, 08:48 PM
اک بھیگی ہوئی سی رات ملے
اس رات میں تیرا ہاتھ ملے
تیرے لب سے ٹپکیں جوبوندیں
انہیں میرے لبوں کا ساتھ ملے
پھرتم آؤ میری بہاؤں میں
میں پیارکروں تمہیں جی بھرکے
تم مجھ سے تھوڑا شرماؤ
شرما کے گلے سے لگ جاؤ
میں جتنا تم سے پیارکروں
تم اُتنا ہی بیتاب ہو جاؤ
ہمیں پیار کے کچھ لمحات ملیں
اک بھیگی ہوئی سی رات ملے
اس رات میں تیرا ہاتھ ملے