PDA

View Full Version : حمد و نعت



تانیہ
11-19-2010, 09:34 PM
حاضر ہیں ترےدربار میں ہم اﷲ کرم، اﷲ کرم
دیتی ہےصدا یہ چشم نم، اﷲ کرم، اﷲ کرم

ہیبت سےہر اک گردن خم ہے ہر آنکھ ندامت سےنم ہے
ہر چہرے پہ ہے اشکوں سےرقم، اﷲ کرم، اﷲ کرم

جن لوگوں پہ ہے انعام تیرا ان لوگوں میں لکھ دے نام میرا
محشر میں مرا رہ جائے بھرم اﷲ کرم، اﷲ کرم

ہر سال طلب فرما مجھ کو ہر سال یہ شہر دکھا مجھ کو
ہر سال کروں میں طوافِ حرم، اﷲ کرم، اﷲ کرم

میری آنےوالی سب نسلیں ترےگھر آئیں ترا در دیکھیں
اسباب ہوں اُن کو ایسےبہم، اﷲ کرم، اﷲ کرم

اس ورد میں عمر کٹےساری، ہونٹوں پہ صبیح رہےجاری
اﷲ کرم، اﷲ کرم، اﷲ کرم، اﷲ کرم[hr]
نعت شریف

یہ ناز یہ انداز ہمارے نہیں ہوتے
جھولی میں اگر ٹکڑے تمھارے (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) نہیں ہوتے

جب تک کہ مدینےسے اشارے نہیں ہوتے
روشن کبھی قسمت کے ستارے نہیں ہوتے

ملتی نہ اگر بھیک حضور (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) آپ (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) کےدر سے
اِس ٹھاٹ سےمنگتوں کےگزار ے نہیں ہوتے

بےدام ہی بک جائیےبازار نبی (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) میں
اس شان کےسودے میں خسارے نہیں ہوتے

وہ چاہیں بلا لیں جسے یہ اُن (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) کا کرم ہے
بےاذن مدینےکےنظارے نہیں ہوتے

ہم جیسےنکموں کو گلےکون لگاتا
سرکار (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) اگر آپ ہمارے نہیں ہوتے

خالد یہ تصدق ہے فقط نعت کا ورنہ
محشر میں ترے وارے نیارے نہیں ہوتے

علی عمران
11-19-2010, 11:24 PM
واہ جی واہ بہت خوب سبحان اللہ.......................

بےباک
11-20-2010, 07:19 PM
تانیہ جی : آپ کی دو نعتیں دیکھیں ، ماشاءاللہ بہت ہی خوبصورت تھیں ، شکریہ آپ کا

ہم جیسےنکموں کو گلےکون لگاتا
سرکار (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) اگر آپ ہمارے نہیں ہوتے

خالد یہ تصدق ہے فقط نعت کا ورنہ
محشر میں ترے وارے نیارے نہیں ہوتے

محمدانوش
11-22-2010, 07:10 PM
ماشاء اللہ
لے بھئی تانیہ تیار ہوجا ہن میں وی آگیا ای

ماشاء اللہ بہت خوبصورت نعتیں لکھیں

تانیہ
11-28-2010, 02:43 PM
ویلکم آپکو بھائی جان[hr]
از: خالد محمود خالد نقشبندی

زباں محو ثناء ہےگنبد خضراء کےسائےمیں
مؤدب التجا ہےگنبد خضراء کےسائےمیں

ہم اپنا دامن مقصود بھر لائےمرادوں سے
ہمیں سب کچھ ملا ہےگنبد خضراء کےسائے میں

کلام پاک دیتا ہےگواہی اس حقیقت کی
مقدر جاگتا ہےگنبد خضراء کےسائے میں

ملےگا حشر کےدن بھی وہ میزان محبت پر
وہ آنسو جو گرا ہےگنبد خضرا کےسائےمیں

اگر سینےمیں ہوتا تو دھڑکنےکی صدا آتی
یہ دل کھویا ہوا ہےگنبد خضراء کےسائے میں

کبھی خود کوکبھی اُن (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) کےکرم کو دیکھتا ہوں میں
کہ مجھ سا بےنوا ہےگنبد خضراء کےسائےمیں

سمجھتا ہےخموشی کی زباں اُن (صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم) کا کرم خالد
خموشی بھی صدا ہےگنبد خضراء کےسائے میں

تانیہ
02-09-2011, 05:03 PM
http://img297.imageshack.us/img297/5914/normalshahearboajam.jpg
سوہنے آقا آئے نے رحمت نال لیائے نے
سارے عالم دے وچ ویکھو نور دے بدل چھائے نے

الصلوة والسلام و علیک یا رسول اللہ الصلوة والسلام علیک یا حبیب اللہ

نور دے نال بھر گیا اے آمنہ بی بی دا گھر
حوراں وی جنت چوں آکے نوری نغمے گائے نے

الصلوة والسلام و علیک یا رسول اللہ الصلوة والسلام علیک یا حبیب اللہ

سارے عالم دے وچ دھوم آقا دے میلاد دی
عاشقاں وی رل مل کے میلاد دے جشن منائے نے

الصلوة والسلام و علیک یا رسول اللہ الصلوة والسلام علیک یا حبیب اللہ

آقا دی آمد تے لائے رب نے جھڈے کعبے تے
سنیاں نے وی رل مل سارے جھنڈے جھنڈیاں لائے نے

الصلوة والسلام و علیک یا رسول اللہ الصلوة والسلام علیک یا حبیب اللہ

آقا دی آمد تے جھکیا کعبہ وی سجدے دے وچ
فلکاں توں ملکاں نے آکے نوری سہرے گائے نے

الصلوة والسلام و علیک یا رسول اللہ الصلوة والسلام علیک یا حبیب اللہ

دتی گواہی کنکراں بت پئے سجدے دے وچ
پیارے آقا کول آکے شجراں سیس نوائے نے

الصلوة والسلام و علیک یا رسول اللہ الصلوة والسلام علیک یا حبیب اللہ

یا رسول اللہ دے نعرے نال سانوں پیار اے
اس نعرے نے سب دے یارو ڈبدے پار لگائے نے

الصلوة والسلام و علیک یا رسول اللہ الصلوة والسلام علیک یا حبیب اللہ

ثاقب جس دی دھم مچی اے سب جہاناں دے اندر
اللہ دے محبوب پیارے آمنہ بی دے جائے نے

الصلوة والسلام و علیک یا رسول اللہ الصلوة والسلام علیک یا حبیب اللہ

تانیہ
02-09-2011, 05:08 PM
http://img690.imageshack.us/img690/3789/madina4.jpg
سوہنے نبی دی آمد اے سوہنے نبی دی آمد اے
سوہنے نبی دی آمد اے سوہنے نبی دی آمد اے
جیدے ورگا کوئی نیئں ہونا اس سوہنے دی آمد اے
نوری نوری چہرہ اوہدا ہے یسین دا سہرا اہدا
رحمت عالم نورِ مجسم بدرالدجیٰ دی آمد اے
تیری ستی ہوئی قسمت دائی حلیمہ جاگ اٹھی اے
تیرے کچے جئے گھر وچ ہاں نور خدا دی آمد اے
اساڈے جئے دکھیاں دا سہارا اللہ دا محبوب پیارا
عرشاں اتے جاون والے نور خدا دی آمد اے
آقا دا میلاد مناﺅ جھنڈے جھنڈیاں سارے لگاﺅ
نالے اپنے گھر وی سجاﺅ آمنہ جائے دی آمد اے
دور بلاواں کردا سوہنا امت دا دم بھر دا سوہنا
اللہ دے محبوب پیارے اُمی نبی دی آمد اے
ثاقب جس دن سوہنا آیا اس دن اچا رتبہ پایا
گھر نوں سجاﺅں خوشیاں مناﺅ سوہنے نبی دی آمد اے

تانیہ
02-09-2011, 05:12 PM
http://img40.imageshack.us/img40/9043/normalnabi20aaj20paida2.jpg
دھوم مچا دو چاروں طرف یہ کر کے تم اعلان
آج آئے دنیا میں ہیں نبیوں کے سلطان

بارہ ربیع الاول کے دن آقا آئے دنیا میں
ان کی آمد پر رحمت کے بادل چھائے دنیا میں
جشن مناﺅ تم آقا کا خوش ہو گا رحمان

کعبے نے ہے سلامی دی سب نبیوں کے سردار کو
امت کو جو جان سے پیارا اس امت کے غمخوار کو
جشن منا کے کر لو سب تم بخشش کا سامان

آمد کے دن سب دنیا پر ابر کرم کا چھایا تھا
دائی حلیمہ نے آکر آقا کو سینے لگایا تھا
دائی حلیمہ تیرے مقدر پر ہم سب قربان

آمد کی ہے دھوم مچا کے گیت نبی کے گاﺅ بھی
جھنڈے اور جھنڈیاں لگا کر اپنے گھر کو سجاﺅ بھی
آقا کا ہے مدح خوان یارو خود رحمان

آقا کی آمد پر سارے ابر کرم کے چھائے
ثاقب تیری حیثیت کیا ہے جو گیت نبی کے گائے
آقا کا تو مدح خوان ہے رب کا سارا قرآن

تانیہ
02-09-2011, 05:18 PM
http://urdulook.info/imagehost/?di=14129726183210

سرکار کی آمد مرحبا
سالار کی آمد مرحبا
مختار کی آمد مرحبا
منٹھار کی آمد مرحبا
دلدار کی آمد مرحبا
غمخوار کی آمد مرحبا
تاجدار کی آمد مرحبا
شاندار کی آمد مرحبا
شہِ ابرار کی آمد مرحبا
شہریار کی آمد مرحبا
حُضور کی آمد مرحبا
پُرنور کی آمد مرحبا
غیور کی آمد مرحبا
اُس نور کی آمد مرحبا
رسول کی آمد مرحبا
مقبول کی آمد مرحبا
آمنہ کے پھول کی آمد مرحبا
یاسین کی آمد مرحبا
طہٰ کی آمد مرحبا
مُزّمل کی آمد مرحبا
مُبشر کی آمد مرحبا
پیارے کی آمد مرحبا
اچھے کی آمد مرحبا
سچے کی امد مرحبا
سوہنے کی آمد مرحبا
موہنے کی آمد مرحبا
بشیر کی آمد مرحبا
نذیر کی آمد مرحبا
منیر کی آمد مرحبا
بصیر کی آمد مرحبا
شبیر کی آمد مرحبا
خبیر کی آمد مرحبا
ظہیر کی آمد مرحبا
رﺅف کی آمد مرحبا
رحیم کی آمد مرحبا
کریم کی آمد مرحبا
نعیم کی آمد مرحبا
علیم کی آمد مرحبا
حلیم کی آمد مرحبا
حکیم کی آمد مرحبا
عظیم کی آمد مرحبا
آقا کی آمد مرحبا
داتا کی آمد مرحبا
مولیٰ کی آمد مرحبا
اولیٰ کی آمد مرحبا
اعلیٰ کی آمد مرحبا
والا کی آمد مرحبا
بالا کی آمد مرحبا
پیشوا کی آمد مرحبا
دلبر کی آمد مرحبا
رہبر کی آمد مرحبا
افسر کی آمد مرحبا
سرور کی آمد مرحبا
تاجور کی آمد مرحبا
پیمبر کی آمد مرحبا
منور کی آمد مرحبا
معطر کی آمد مرحبا
شاہِ بحر وبر کی آمد مرحبا
رسولِ انور کی آمد مرحبا
حبیب ِ داور کی آمد مرحبا
ساقیِ کوثر کی آمد مرحبا
مکی کی آمد مرحبا
مدنی کی آمد مرحبا
عربی کی آمد مرحبا
قرشی کی آمد مرحبا
ہاشمی کی آمد مرحبا
مطلمی کی آمد مرحبا
سلطان کی آمد مرحبا
ذیشاں کی آمد مرحبا
غیب داں کی آمد مرحبا
جانِ جاناں کی آمد مرحبا
سیاحِ افلاک کی آمد مرحبا
محبوب زماں کی آمد مرحبا
سرور دوجہاں کی آمد مرحبا
شہِ کون ومکاں کی آمد مرحبا
محبوب رب کی آمد مرحبا
سلطانِ عرب کی آمد مرحبا
رسول اکرم کی آمد مرحبا
نور مجسم کی آمد مرحبا
نورِ مجسم کی آمد مرحبا
شاہِ بنی آدم کی آمد مرحبا
نبیِ محتشم کی آمد مرحبا
شاہِ عرب وعجم کی آمد مرحبا
شافعِ اُمم کی آمد مرحبا
سراپاجودوکرم کی آمد مرحبا
سید کی آمد مرحبا
جید کی آمد مرحبا
طیب کی آمد مرحبا
طاہر کی آمد مرحبا
حاضر کی آمد مرحبا
ناظر کی آمد مرحبا
ناصر کی آمد مرحبا
ظاہر کی آمد مرحبا
باطن کی آمد مرحبا
حامی کی آمد مرحبا

تانیہ
02-09-2011, 05:29 PM
بارھویں کا چاند آیا !!

بچہ بچہ مسکرایا بارھویں کا چاند آیا
خوشیوں کا طوفان لایا بارھویں کا چاند آیا !!

شادمانی کے ترانے گونجتے ہیں دہر میں
وجد میں ہر شخص آیا بارھویں کا چاند آیا !!

روشنی ہی روشنی ہے چاندنی ہی چاندنی
ذرہ ذرہ جگمگایا بارھویں کا چاند آیا !!

ہو گئے ہیں بند سارے ظلمتوں کے باب آج
دہر میں وہ نور آیا بارھویں کا چاند آیا !!

کھل اٹھیں کلیاں محبت کی گلوں پر ہے نکھار
باغ الفت لہلہایا بارھویں کا چاند آیا !!

ساز جاں پر بج رہا ہے ایک نغمہ بار بار
آمنہ کا لعل آیا بارھویں کا چاند آیا !!

شکر کرتے ہی رہو رب کا اجاگر صبح و شام
رب کا کیسا فضل پایا بارھویں کا چاند آیا !!
__________________
یہی فیصلے ہیں شعور کے سدا گیت گاؤں حضور کے
نہیں پیار جس کو حضور سے وہ آدمی ہی فضول ہے!!
صلو علیہ وآلہ صلو علیہ وآلہ !!

تانیہ
02-09-2011, 05:40 PM
http://4.bp.blogspot.com/_NQKodVNpa-I/S4jlNRScf5I/AAAAAAAAEvc/vrZv6O5FwQA/s320/EidMillad3.jpg
شاہ کونین جلوہ نما ہوگیا

شاہ کونین جلوہ نما ہوگیا
رنگ عالم کا بالکل نیا ہوگیا

منتخب آپکی ذات والا ہوئی
نام پاک آپکا مصطفٰی ہوگیا

مل گیا تجھ سے اللہ کا راستہ
حق سے ملنے کا تو واسطہ ہوگیا

آپ وہ نور ہیں کہ قرآن میں
وصف رخ آپکا والضحٰے ہوگیا

ایسا اعزاز کس کو خدا نے دیا
جیسا بالا تیرا مرتبہ ہوگیا

ایسی نافذ تمہاری حکومت ہوئی
تم نے جس وقت جو کچھ کہا ہوگیا

مہ پارہ ہوا سورج الٹا پھرا !
جب اشارہ تمہارا ذرا ہوگیا

کن کی کنجی نہ کیونکر ہو تیری زباں
حکم رحمٰن تیرا کہا ہو گیا

جس نے نظارہء سبز گنبد کیا
اُس کا پورا ہر اک مدعا ہوگیا

ہم بھی طیبہ کو اڑ جائیں گے ایک دن
ناز تجھ کو کیوں بادِ صبا ہوگیا

تیرے ہی نور سے دونوں عالم بنے
تو ہی تو ابتداء انتہا ہوگیا

اُس نے واللہ اللہ کو پالیا!
جو کوئی تجھ پہ دل سے فدا ہو گیا

نام تیرا دم نزع جس نے لیا!
اُس کا ایمان پر خاتمہ ہوگیا

علمِ غیب نبی کا جو منکر ہوا
قہر قہار میں مبتلا ہوگیا

دیکھ آئینہ نجدی کہ توہین سے
تیرا چہرہ تو الٹا توا ہو گیا!

ناز کر اے جمیل اپنی قسمت پہ تو
خاکِ نعلین احمد رضا ہوگیا!

تانیہ
02-09-2011, 05:43 PM
http://www.sadayeafghan.com/aks/milad.gif

خوشی سب ہی مناتے ہیں میرے سرکار آتے ہیں

خوشی سب ہی مناتے ہیں میرے سرکار آتے ہیں
دیوانے جھوم جاتے ہیں میرے سکار آتے ہیں

ولادت کی گھڑی آئی بہار اب جھوم کر چھائی !
وہ دیکھو آگئے آقا دیوانے دھوم مچاتے ہیں

خوشی ہے آمنہ کے گھر وہ آئے نور کے پیکر !
جو پیدا ہو کے سجدے میں سر انور کو جھکاتے ہیں

فرشتوں کی یہ سنت ہے کہ آقا کی محبت ہے
مینارو اور مکانوں پر جو جھنڈے ہم لہراتے ہیں

دہن بھی نور نور ہے، بدن بھی نور نور ہے !
نظر بھی نور نور ہے وہ نور حق کہلاتے ہیں

چراغاں کیا کریں گے تارے آ کے ان کی محفل میں
یہ تارے روشنی جن سے پاتے ہیں وہ آتے ہیں

تانیہ
02-09-2011, 06:32 PM
http://img46.imageshack.us/img46/4408/eidmiladunnabiwwwalqirtg.jpg

صبا نے کس کی آمد کی سنائی ،۔،۔،۔، مراد بلبل بے تاب لائی

مچی ہیں شادیاں کیس گلوں میں ،۔،۔،۔، مبارکبادیاں ہیں بلبلوں میں

یہ نرگس کس کا رستہ دیکھتی ہے ،۔،۔،۔، یہ سوسن کس کی مدحت کر رہی ہے

کھلے پڑتے ہیں سب غنچے یہ کیا ہے ،۔،۔،۔، انہیں کس پھول کا شوق لقا ہے

نئی پوشاک بدلی گلوں نے ،۔،۔،۔، مچایا شور ہے کیوں بلبلوں نے

نئی معلوم ہے یہ ماجرا کیا ،۔،۔،۔، یہ کیسا حکم ہے رضواں کو آیا

بنا دے تو چمن ہر ایک بن کو ،۔،۔،۔، نہ ہو جنت سے کچھ نسبت دلہن کو

ہوا مالک کو یہ حکم خداوندی ،۔،۔،۔، کہ دروازے جہنم کہ ہوں سب بند

قریشی جانور کیوں بولتے ہیں ،۔،۔،۔، یہ کس کے وصف میں لب کھولتے ہیں

زمین کی سمت کیوں مائل ہیں تارے ،۔،۔،۔، یہ کس کی دید کے سائل ہیں تارے

یہ بت کس واسطے اوندھے پڑے ہیں ،۔،۔،۔، زمین پہ کیوں خجالت سے گرے ہیں

زمیں پر کیوں ملائک آرہے ہیں ،۔،۔،۔، یہ کیوں تحفے پہ تحفے لا رہے ہیں

یہ آمد کون سے ذیشان کی ہے ،۔،۔،۔، یہ آمد کون سے سلطان کی ہے


اسی حیرت میں تھے اہل تماشہ
کہ ناگہ ہاتف غیبی یہ بولا


وہ اٹھی دیکھ لو گرد سواری ،۔،۔،۔، عیاں ہونے لگے انوار باری

نقیبوں کی صدائیں آ رہی ہیں ،۔،۔،۔، کسی کی جان کو تڑپا رہی ہیں

مؤدب ہاتھ باندھے آگے آگے ،۔،۔،۔، چلے آتے ہیں کہتے آگے آگے

فدا جن کے شرف پر سب نبی ہیں ،۔،۔،۔، یہی ہیں وہ یہی ہیں وہ یہی ہیں

یہی والی ہیں سارے بیکسوں کے ،۔،۔،۔، یہی فریادرس ہیں بے بسوں کے

انہی کی ذات ہے سب کا سہارا ،۔،۔،۔، انہی کے در سے ہے سب کا گزارا

انہیں سے کرتی ہیں فریاد چڑیاں ،۔،۔،۔، انہیں سے چاہتی ہیں داد چڑیاں

یہی ہیں جع عطا فرمائیں دولت ،۔،۔،۔، کریں خود جو کی روٹی پر قناعت

انہیں پر دونوں عالم مر رہے رہے ہیں ،۔،۔،۔، انہیں پر جان صدقے کر رہے ہیں

فزوں رتبہ ہے صبح وشام ان کا ،۔،۔،۔، محمد مصطفٰی ہے نام ان کا

کوئی دامن سے لپٹا رو رہا ہے ،۔،۔،۔، کوئی ہر گام محو التجاء ہے

ادھر بھی اک نظر ہو تاج والے ،۔،۔،۔، کوئی کب تک دل مضطر سنبھالے

بہت نزدیک آ پہنچا وہ پیارا ،۔،۔،۔، فدا ہے جان و دل جس پر ہمارا

اٹھیں تعظیم کو یاران محفل ،۔،۔،۔، ہوا جلوہ نما وہ جان محفل