PDA

View Full Version : نفرتوں کے تیر کھا کر دوستوں کے شہر میں



سیما
05-31-2011, 03:18 AM
ہم کو کس کے غم نے مارا یہ کہانی پھر سہی
کس نے توڑا دل ہمارا یہ کہانی پھر سہی

دل کے لٹنے کا سبب پوچھو نہ سب کے سامنے
نام آئے گا تمہارا یہ کہانی پھر سہی

نفرتوں کے تیر کھا کر دوستوں کے شہر میں
ہم نے کس کس کو پکارا یہ کہانی پھر سہی

کیا بتائیں پیار کی بازی وفا کی راہ میں
کون جیتا کون ہارا یہ کہانی پھر سہی
شاعر مسرور انور

عبادت
05-31-2011, 03:31 AM
ہماری انکھوں میں وفا کی امید رہنے دو
سنو! تم ہمیں ذرہ اپنے پاس رہنے دو



کیوں تمہیں لگتا ہےتمہیں ہم تم سے چرا لیں گۓ
سنو! تم پہلے ہی ہم ہو، ہمیں ہم تم ہی رہنے دو

عبادت
05-31-2011, 03:34 AM
غم نصیبوں کو کسی نے تو پکارا ہو گا
اس بھری بزم میں کوئی تو ہمارا ہو گا

آج کس یاد سے چمکی تیری چشم پرنم
جانے یہ کس کے مقدر کا ستارا ہو گا

جانے اب حسن لٹاے گا کہاں دولت درد
جانے اب کس کو غم عشق کایارا ہو گا

تیرے چھپنے سے چھپیں گئ نہ ہماری یادیں
تو جہاں ہو گا وہیں ذکر ہمارا ہو گا

یوں جدائی تو گوارہ تھی یہ معلوم نہ تھا
تجھ سے یوں مل کر بچھڑنا بھی گوارہ ہو گا

چھوڑ کر آے تھے جب شہر تمنا ہم لوگ
مدتوں راہگزاروں نے پکارا ہو گا

مسکراتا ہے تو اک آہ نکل جاتی ہے
یہ تبسم بھی کوئی درد کا مارا ہو گا

اذان
05-31-2011, 04:28 AM
http://rajafamily.com/lib/00051A05B.gifhttp://rajafamily.com/lib/00051A05C.gifhttp://rajafamily.com/lib/00051A05B.gif
http://rajafamily.com/lib/00051A05D.gif

اوشو
06-01-2011, 12:21 AM
اچھی شاعری ہے لیکن دوستوں سے گزارش ہے کہ اپنی اپنی پسندیدہ شاعری کی الگ الگ لڑیاں بنا لیں تو زیادہ بہتر ہے. جو لڑی کوئی دوست شروع کرتا ہے اس لڑی میں اسے ہی لکھنے دیا کریں یا اس کی لکھی گئی شاعری پر تبصرہ فرمایا کریں تو زیادہ مناسب رہے گا.:heart:

عبادت
06-02-2011, 02:29 AM
اوشو بھائی آپ نے درست فرمایا
لیکن لکھنے کی وجہ کچھ یوں ہے کہ جو دوست بھی کوئی غز ل نظم یا کچھ اشعار
لکھتا ہے تو اگلی باری نئے سٹیپ سے لکھتا ہے
اگر کوئی ا سےپڑھنے کے لیے ان کےآرٹیکل تک پہنچے تو اسے پڑھنے کو دو چار
غزلیں ایک ساتھ ملیں تو اچھا پوائینٹ ہو گا
میں توخاص کر کے اسی ویو سے لکھتا ہوں راے میں
باقی اپ کی بات سو فیصد درست ہے

این اے ناصر
03-31-2012, 01:06 PM
واہ بہت خوب۔ شکریہ