PDA

View Full Version : آنتوں کے کینسر کا خطرہ دس فیصد کم



محمدمعروف
11-11-2011, 08:03 PM
ایک نئی تحقیق کے مطابق گندم اور دوسرے اناج باقاعدگی سے کھانے سے آنتوں کے کینسر سے بچا جاسکتا ہے۔
برطانیہ کے امپیریئل کالج لندن کے تحقیق کاروں کے مطابق اگر ہر روز بھوسی یا ریشے والی خوراک میں دس گرام اضافہ کیا جائے تو آنتوں کے کینسر کا خطرہ دس فیصد کم کیا جا سکتا ہے۔
لیکن انہی تحقیق کاروں کے مطابق اسی بارے میں ہونے والی پچھلی 25 تحقیقات کے تجزیے سے پتہ چلا ہے کہ پھل اور سبزیوں میں پائے جانے والے ریشے سے یہ خطرہ کم نہیں ہوتا۔
کینسر کے خلاف کام کرنے والے ایک فلاحی ادارے نے زور دیا ہے کہ اس معاملے پر تفصیلی تحقیق کی جائے کہ کس قسم کے ریشے والی غذا کتنی کھائی جائے۔
ریشے یا اناج والی خوراک کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ وہ دل کے امراض کی روک تھام میں مدد گار ہوتی ہے لیکن ماہرین کہتے ہیں کہ آنتوں کے کینسر سے اناجی غذا کا تعلق ابھی اتنا واضح نہیں ہے کیونکہ اب تک ہونے والی تحقیقوں سے اس بارے میں مستقل شواہد نہیں ملے ہیں۔
لندن، لیڈز اور ہالینڈ کے تحقیق کاروں نے اس شعبے میں ماضی میں ہوئی تحقیقوں کے نتائج پر نظرِ ثانی کی اور اس طرح لگ بھگ بیس لاکھ لوگوں سے حاصل کی گئی معلومات کا تجزیہ کیا۔
ان کے تجزیے کے نتائج برطانوی طبی جریدے ’برٹش میڈیکل جرنل‘ میں شائع ہوئے ہیں جس کے مطابق ریشے والی خوراک خاص طور پر سالم اناج اور بھوسی والی خوراک میں یومیہ اضافہ آنتوں کے کینسر سے محفوظ رہنے میں مدد دیتا ہے۔
ان تحقیق کاروں کے مطابق مکمل اناج والی غذا سے مراد بھوسی والی گندم کی ڈبل روٹی، چھلکے والے چاول، چنا اور دلیہ وغیرہ ہے۔

بشکریہ بی بی سی اردو ڈاٹ کام

بےباک
11-12-2011, 05:36 AM
جزاک اللہ ،
بہت ہی اچھی معلومات پیش کی آپ نے ،
ہماری صحت تو ہمیں ہی خیال رکھنا چاھیے ،
ایسی قیمتی معلومات آپ لازمی پیش کرتے رھا کریں ،

این اے ناصر
04-03-2012, 11:18 AM
مفیدمعلومات کے لیے بہت بہت شکریہ۔