PDA

View Full Version : دل میں اب یوں تیرے بُھولے ہُوئے غم آتے ہیں



ایم-ایم
11-24-2011, 06:09 PM
دل میں اب یوں تیرے بُھولے ہُوئے غم آتے ہیں
جیسے بچھڑے ہُوئے کعبے میں صنم آتے ہیں

ایک اِک کرکے ہُوئے جاتے ہیں تارے روشن
میری منزل کی طرف تیرے قدم آتے ہیں

رقصِ مَے تیز کرو، ساز کی لَے تیز کرو
سُوئے مَے خانہ سفیرانِ حرم آتے ہیں

کچھ ہمیں کو نہیں احسان اُٹھانے کا دماغ
وہ تو جب آتے ہیں، مائل بہ کرم آتے ہیں

اور کچھ دیر نہ گزرے شبِ فُرقت سے کہو
دل بھی کم دُکھتا ہے، وہ یاد بھی کم آتے ہیں

این اے ناصر
04-16-2012, 10:44 AM
واہ بہت خوب جناب ۔ شئیرنگ کاشکریہ۔