PDA

View Full Version : میں۔۔۔۔۔اور۔۔۔۔۔ حُسین(علیہ سلام)



علی عمران
11-16-2010, 12:43 AM
حُسین(علیہ سلام)! میں تو وہ بے وفا ہوں
جو تیرا اَب تک نہ بن سکا ہوں
مَیں دِین پَناہی “ میں کَب مَرا ہوں
نہ تیرے جادے پہ میں چلا ہوں
کہاں ہیں اَطوارِ مومنانہ
ہے میری ہر سوچ ظالمانہ

فضا میں خولی کے قہقہے۔۔۔۔۔ ہیں
رَذیلِ کربَل کے دَبدَبےہیں
یزیدوحُرمل بھی پھر رہے ہیں
نہ دِل کو محسوس ہو سکے ہیں
حُسین(علیہ سلام)! تُو ہی بتا میں کیا ہوں
مُحِب ہوں تیرا کہ بےوفا ہوں

وہ پھر رہے ہیں جو دندناتے
یزیدیت کے ہیں گِیت گاتے
جہاں کے حُرمل ہیں مُسکراتے
مگر میں بیٹھا ہوں سر جُھکا کے
یہ بدنصیبی کی انتہا ہے
کہ اب بھی زندہ ہوں بات کیا ہے

حُسین(علیہ سلام) ! سچ ہے مَیں بے وفا ہوں
اصُولِ دیں“ سے میں لڑ رہا ہوں
نہ تیری راہ میں فِدا ہُوا ہوں
کہوں میں کیونکر کہ باوفا ہوں
نہ تیری امداد کر سکا ہوں
نہ تیری اُلفت میں مَر سکا ہوں

ہے کون کہتا وفا پسند ہوں
بتانِ سیم وطِلاَ پسند ہوں
نہ تیری فِکرووِلا پسند ہوں
حُسین(علیہ سلام) ! مَیں تو رِیاَ پسند ہوں
نہ تجھ کو اپنابنا سکا ہوں
نہ اپنے دِل میں بسا سکا ہوں

حُسین(علیہ سلام)! تیرے جہاں میں کچھ ہوں
جہانِ سیلِ رواں میں کچھ ہوں
قلم میں کچھ ہوں ز باں میں کچھ ہوں
عمل میں کچھ ہوں بیاں میں کچھ ہوں
فقط یہ صورت ہے زاہدانہ
ہے میرا ہر فعل شاطرانہ

حُسین(علیہ سلام)! شیدا ہوں میں غنا کا
انیس و غمخوار ہوں رِیا کا
نہ عِلم رکھتا ہوں ابتدا کا
نہیں ہوں واقف میں انتہا کا
لہُو کے آنسو بہاؤں کیونکر
میں سوگ تیرا مناؤں کیونکر

بےباک
11-20-2010, 04:36 PM
بہت ہی شاندار ،اورحضرت حسین رضی اللہ تعالی جنت کے شہداء کے سردار ہیں ، امت مسلمہ کو زندہ رہنے کا مقصد عطا فرما گئے ،
اللہ تعالی ان نے درجات مزید بلند فرمائے ، اور امتِ مسلمہ کو ان کے نقشِ قدم پر چلنے کی توفیق دے ، آمین ،
بقول شاعر :
قتل حسین (رضی اللہ عنہ) اصل میں مرگِ یزید ہے ،،،
اسلام زندہ ہوتا ہے ہر کربلا کے بعد