PDA

View Full Version : آداب و معاملات



نجم الحسن
04-27-2012, 12:28 AM
خرید وفروخت کے مسائل بے شمار ہیں یہاں چند ضروری اور روزمرہ پیش آنے والے مسائل کا ذکر مختصر طور پر کیا جاتاہے:۔
[۱]۔۔۔ہرقسم کا سودا بیچتے وقت اس کی کوئی چیز نہیں چھپی رہنی چاہیے اور اگر اس میں کوئی عیب یا خامی ہو تو خریدار کو اس سے باخبر کردینا چاہیے
[۲]۔۔۔خراب مال نیچے اور اچھا مال اوپر رکھ کر فروخت نہ کیا جائے۔
[۳]۔۔۔اگر مال واپسی کی شرط پر خریداگیاہوتوناپسندیدگی کی صورت میں وقتِ مقررہ کے اندر اندر واپس کردینا چاہیے تاکہ بعد میں کوئی نزع(جھگڑا) نہ پیدا ہو۔
[۴]۔۔۔بیچنے والے کو اختیار ہے کہ اپنا سودا کتنے ہی زیادہ منافع پر بیچے بازار سے گِراں بیچے یا ارزاں اسے شرعاً ہر طرح اجازت ہے لیکن اس سلسلے میں گاہک سے کوئی غلط بیانی نہ کرے خاص کر قیمتِ خرید دانستہ زیادہ نہ بتائے۔
[۵]۔۔۔کھری اور کھوٹی یا بری اور اچھی چیز ملا کر دھوکا دینے کی کوشش سخت گناہ ہے۔
[۶]۔۔۔ناپ تول میں کمی بیشی کرنا بڑا سخت گناہ ہے بعض دکاندار خریدتے وقت چیز زیادہ لینے کی کوشش کرتے ہیں اور بیچتے وقت کم دینا چاہتے ہیں قرآن مجید میں اس کی بڑی مذمت کی گئی ہے
(7)اور بتا دینا چاہیے کہ یہ چیز آپ کے لیے خریدی جارہی ہے کل کو آپ نے اس کی رقم ادا کرنی ہے
۔