PDA

View Full Version : محبت کو اگر سمجھو تو اپنی ذات جیسی ہے



تانیہ
12-07-2010, 04:10 PM
محبت اس طرح جیسے گلابی تتلیوں کے پر
محبت زندگی کی جبینِ ناز کا جھومر
محبت آرزو کی سیپ کا انمول سا گوہر
محبت آس کی دھوپ میں امید کی چادر
محبت ہے تیر ے گیسو، تیری پلکیں ، تیری آنکھیں
محبت ہے تیری باتیں ،محبت ہے تمھارے ہجر کی اور وصل کی راتیں
محبت ہے تیری دھڑکن، محبت ہے تیری سانسیں
محبت تیری خاموشی ، تمھاری بات جیسی ہے
محبت کو اگر سمجھو تو اپنی ذات جیسی ہے