PDA

View Full Version : افغانستان سے پاکستان پر حملے



بےباک
07-29-2012, 10:58 PM
http://ummat.com.pk/story/wp-content/uploads/2012/07/120729-s1.gif
http://ummat.com.pk/story/wp-content/uploads/2012/07/120729-s1a.gif

pervaz khan
07-30-2012, 12:18 PM
بہت عمدہ

انجم رشید
07-30-2012, 03:43 PM
السلام علیکم
بھائی اس کا صرف ایک ہی حل ہے دوسروں کی جنگ سے علیحدگی اور نیٹو سپلای بند امریکی امداد نہ لی جائے۔ امریکہ کو آنکھیں دکھائیں ۔لیکن یہ سب کچھ کون کرے کیا ہمارے حکمران جن کی جیب مین ڈالر جا رہے ہیں

شاہنواز
09-24-2012, 12:41 AM
بے باک جی یہ کوئے نئ بات نہیں افغانستان نے جب پاکستان قائم ہوا تھا تو اس وقت بھی پاکستان کے قیام کو تسلیم نہیں کیا تھا اب اگر وہان سے پاکستان پر حملے ہورہے ہیں تو کیا ہوا کوئی نئ بات کریں افغانستان تو پاکستان کے وجود کو ہی تسلیم کرنے سے انکاری ہے تو اس سے کون سی اچھائی کی امید رکھی جاسکتی ہے اب جبکہ برسہا برس پاکستان افغانیوں کی جاہ پناہ بنا ہوا ہے اور اپنے ملک میں پناہ دئے ہوئے ہیں پھر بھی یہ کارستانیاں جاری رکھے ہوئے ہے یہ ہمارے حکمرانوں کی پالیسیاں ہی ایسی ہیں کہ کسی بھی ہمسایہ چاہے مسلم ملک کیوں نہ ہو پاکستان کی نہیں بنتی

tashfin28
10-05-2012, 08:36 PM
پاکستان اور افغانستان سرحدی علاقوں ميں عسکریت پسندوں کے حملے
محترم اراکين،
السلام عليکم،

یہ سمجھنا واقعی بہت اہم ہے کہ علاقائی استحکام کا دارومدار پاکستان اور افغانستان میں پائیدار امن اور سیاسی استحکام پر مبنی ہے۔ موجودہ صورتحال خطےميں ہمارے مشترکہ مقاصد کے حصول میں پاکستان اور افغانستان سے اپنا اہم اور کليدی کردار ادا کرنے کا متقاضی ہے۔ اور اس ليۓ ہم پاکستان اورافغانستان سے درخواست کرتے رہے ہيں کہ سرحدی علاقے ميں موجود ان دہشتگردوں کے ٹھکانوں کو ختم کرنے کے لئے ان کوششوں میں مزيد مطابقت اور افہام وتفہيم پيدا کريں، کيونکہ يہ دہشتگرد ان ٹھکانوں کو معصوم شہریوں، پاکستانی سیکورٹی فورسز اور بین الاقوامی فورسز کے خلاف دہشت گرد حملوں کے لئے استعمال کر رہے ہيں۔ حال ہی میں پاکستانی سیکورٹی فورسز کے خلاف سرحد پار سے کۓ گۓ حملے پاکستان، افغانستان، اور نيٹو افواج کے درميان سرحد پار فوری تعاون کی ضرورت کا متقاضی ہے۔

يہ ذکرکرنا بھی بہت ضروری ہے کہ ان انتہا پسندوں کی تنظیموں کے طرف سے خطرے کو نظر انداز کرنا خطے میں مزید افراتفری اور تباہی کا نتیجہ بن سکتی ہے ۔ اصل میں امریکہ، افغانستان، اور پاکستان تمام ممالک دہشت گردی اور عسکریت پسندی کا نشانہ بن چکے ہیں۔ خطے ميں دہشت گردی کی لعنت کو شکست دینے اور پائیدار امن یقینی بنانے کے ليۓ ہم تمام اتحادیوں نے جاری بین الاقوامی جدوجہد میں ایک بھاری قیمت ادا کی ہے۔

ان انتہا پسندوں کے خلاف جاری کوششوں میں ہماری عظیم قربانیوں کو مدنظر رکھتے ہوئے، ہميں ان الزامات کا کھیل بند کرنا ہوگا اور اپنے تمام وسائل خطے میں پائیدار امن اور استحکام کو یقینی بنانے کے لئے وقف کرنا بہت ضروری ہے۔ وقت کی اہم ضرورت ہے کہ ہم متحد ہو کر پورے اور مکمل طاقت کے ساتھ ان غیر انسانی بنیاد پرستوں کا مقابلہ کريں۔


تاشفين – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ
digitaloutreach@state.gov
www.state.gov
https://twitter.com/#!/USDOSDOT_Urdu
http://www.facebook.com/USDOTUrdu

pervaz khan
10-06-2012, 02:41 PM
لیکن جو حقیقت ہے اس سے نظریں چرا کر جھوٹا پراپیگنڈا کرنا اور یک طرفہ راگ الاپنا یہ بھی غلط ہے۔کیونکہ پاکستان میں جو دھشت گردی ہو رہی ہے اس میں امریکہ کا ہاتھ ہے۔امریکہ نے افغانستان میں جو ٹریننگ کیمپ لگا رکھے ہیں ان میں دھشت گردوں کو ٹریننگ دے کر پاکستان میں داخل کیا جا رہا ہے تاکہ پاکستان میں بے گناہ لوگوں کو مارا جائے اور املاک کا نقصان کیا جائے اور کوشش کی جائے کہ احساس جگہوں کو نشانہ بنایا جائے اس شاٹ کٹ میں امریکی پاکستانی طالبان کو ٹریننگ دے رہے ہیں

http://www.youtube.com/watch?v=7mDs02J34FE

میری سب ممبر سے درخواست ہے کہ یہ ویڈیو دیکھیں اور خبر پڑھیں اور تاشفین صاحب کے جھوٹے پراپیگنڈا کا جواب دیں

pervaz khan
10-06-2012, 02:51 PM
افغانستان سے پاکستان پر حملے

انجم رشید
10-06-2012, 09:11 PM
پاکستان اور افغانستان سرحدی علاقوں ميں عسکریت پسندوں کے حملے
يہ ذکرکرنا بھی بہت ضروری ہے کہ ان انتہا پسندوں کی تنظیموں کے طرف سے خطرے کو نظر انداز کرنا خطے میں مزید افراتفری اور تباہی کا نتیجہ بن سکتی ہے ۔ اصل میں امریکہ، افغانستان، اور پاکستان تمام ممالک دہشت گردی اور عسکریت پسندی کا نشانہ بن چکے ہیں۔ خطے ميں دہشت گردی کی لعنت کو شکست دینے اور پائیدار امن یقینی بنانے کے ليۓ ہم تمام اتحادیوں نے جاری بین الاقوامی جدوجہد میں ایک بھاری قیمت ادا کی ہے۔

ان انتہا پسندوں کے خلاف جاری کوششوں میں ہماری عظیم قربانیوں کو مدنظر رکھتے ہوئے، ہميں ان الزامات کا کھیل بند کرنا ہوگا اور اپنے تمام وسائل خطے میں پائیدار امن اور استحکام کو یقینی بنانے کے لئے وقف کرنا بہت ضروری ہے۔ وقت کی اہم ضرورت ہے کہ ہم متحد ہو کر پورے اور مکمل طاقت کے ساتھ ان غیر انسانی بنیاد پرستوں کا مقابلہ کريں۔


تاشفین جی پہلی بات تو یہ ہے کہ قربانیاں ہم نے دی ہیں آپ کے ملک نے کیا قربانیاں دی ہیں جان و مال کا نقصان ہمارہ ہوا آپ کے ملک نے کیا قربانیاں دی ہیں دوسری بات یہ ہے کہ یہ جنگ آپ کے ملک نے شروع کی ہے ہم نے نہیں اور قربانی کا بکرا ہمیں بنایا گیا ہے کیا آپ کے ملک کے قبضہ کرنے سے پہلے طالبان پاکستان میں دہشت گرد کاروایاں کرتے تھے بلکل نہیں کرتے تھے جناب یہ سب کچھ آپ کے ملک کی وجہ سے ہوا ہے ۔
اور جناب آپ کا ملک کب دہشت گردی کا شکار ہوا یہ ضرور بتایں مجھے تو یاد نہیں کہ آپ کا ملک دہشت گردی کا کبھی شکار ہوا ہے ۔
اگر آپ ایک بار پھر 9-11 کا جھوٹا قصہ چھیڑیں گے تو میں پہلے ہی اس بارے میں لکھ چکا ہوں کہ 9-11 کے قصے میں خود آپ کی حکومت ملوث ہے ۔
اور واقعات ثابت کر رہے ہیں کہ آپ کا ملک بھارت سے مل کر طالبان کی مدد کر رہا ہے

tashfin28
10-09-2012, 09:17 PM
تحریک طالبان اور آپ کے بے بنیاد الزامات

محترم پرويز خان
السلام عليکم

آپ کو اپنی رائے دينے کا پورا حق ہے ۔ تاہم میں آپ سے درخواست کرونگا کہ بے بنیاد اور غير ذمدارانہ بیانات دينے سے پہلے زمينی حقائق پر غور زرور کياکريں۔ امریکہ انتہا پسند گروہوں کی حمایت کیوں کرے گا جو اس کی قومی سلامتی کے لئے خطرہ بن سکتے ہيں؟

ميں آپ کو تحریک طالبان کی اصل ارتقا پر کچھ تاریخی حقائق دکھانا چاہتا ہوں جنہيں شايد آپ نظر انداز کچکے ہونگے:

دسمبر 2007 ميں تحريک طالبان پاکستان کا باضابطہ اعلان بيت اللہ محسود کی قيادت ميں کيا گيا تھا۔ ستمبر 1، 2010 کو امريکہ نے تحريک طالبان پاکستان کو ايک بيرونی دہشت گرد تنظيم قرار ديا اور حکيم اللہ محسود اور ولی الرحمن کو "عالمی دہشت گرد" قرار ديا۔

تحریک طالبان کو ایک دہشت گرد تنظیم قرار دینے کی ذیل میں ایک ویڈیو ملاحظہ کریں:

http://www.youtube.com/watch?v=L1XMdVkmdn8&list=UUol54Ybnv6TQt0KZeTBC7zw&index=3&feature=plcp

جہاں تک مسٹر ویبسٹر ٹارپلئ کے تبصرے کا تعلق ہے، میں صرف يہ کہہ سکتا ہوں کہ امریکہ کے ہر شہری کو داخلی اور خارجی مسائل پر ملکی پاليسيوں پر اپنی انفرادی رائے دينے کا پورا ح*ق ہے۔ تاہم يہ ذکر کرنا نہايت ضروری ہے کہ خطے ميں امريکی کردار پر ان کے ذاتی خیالات زمينی حقائق سے بہت دور ہيں۔

زیادہ اہم بات یہ ہے کہ ايسی کوئی قابل فہم وجہ موجود نہيں جو آپ کی اس بے بنياد الزام کو تقويت دے سکے کہ امريکی حکومت ايک ايسی دہشتگرد تنظيم کی حمايت کرے گی جو کہ نا صرف يہ کہ خود ہمارے اپنے فوجيوں کے ليے براہ راست ايک خطرہ ہے بلکہ پاکستان سميت دنيا بھر ميں ہمارے تمام اتحاديوں کا کھلا اور قائم دشمن ہے۔

تاشفين - ڈیجیٹل آؤٹ ریچ ٹیم، شعبہ امریکی وزارت خارجہ
ای میل : digitaloutreach@state.gov
www.state.gov
https://twitter.com/#!/USDOSDOT_Urdu
http://www.facebook.com/USDOTUrdu

pervaz khan
10-10-2012, 02:16 PM
پوری دنیا کے اخبارات اس کے گواہ ہیں ۔ یو ٹیوب پر اس کے ویڈیو لگے ہیں اور خود ایک امریکی ذمہ دار نے اس حقیقت کو تسلیم کیا ہے اس کے باوجود آپ اس حقیقت سے انکار کر رہے ہیں۔مجھے اس پر تعجب نہیں ہے۔بقول آپ کے آپ کو تنخواہ ہی اس کام کی ملتی ہے۔ لیکن آپ اس حقیقت کو جھٹلا نہیں سکتے۔یہ سچ ہے اور اس سچ کو دنیا تسلیم کر چکی ہے ۔آپ کے جھوٹے پرپیگنڈے پر کسی کو یقین نہیں آئے گا۔
ذرا اس خبر پر بھی تھوڑا تبصرہ کر دیں تاسفین صاحب
http://www.guardian.co.uk/world/2012/may/11/anti-islam-teachings-us-law-enforcement