PDA

View Full Version : حکومت عوام پر آر جی ایس ٹی کا بم گرانے کی بجائے غریب عوام کے مفادات کا احترام کرے: نو



گلاب خان
12-08-2010, 08:31 PM
گوجر خان (این این آئی + جی این آئی) پاکستان مسلم لیگ کے قائد اور سابق وزیراعظم میاں محمد نوازشریف نے کہا ہے حکومت عوام پر آر جی ایس ٹی کا بم گرانے کی بجائے غریب عوام کے مفادات کا احترام کرے‘ حکومت مہنگائی اور بدعنوانی میں کمی لائے اور عدالت عظمیٰ سے تعاون کرے۔ اےسے تمام وزرا کو استعفیٰ دے دینا چاہئے جو این آر او زدہ ہیں اور ان وزرا کو احتساب کے لئے اپنے آپ کو پیش کرنا چاہئے۔ مارشل لا ملکوں کو تباہ کرتے ہیں عوامی مینڈیٹ ہی منزل تک لے جاتے ہیں‘ دوبارہ موقع ملا تو اپنا ترقیاتی ایجنڈا مکمل کریں گے۔ ایوان صدر یا وزیراعظم سیکرٹریٹ میں بیٹھنا کوئی ترقی نہیں ہے‘ ہم نے میثاق جمہوریت پر دستخط کسی کی کرپشن کو چھپانے کے لئے نہیں بلکہ عوام کے مفاد میں کئے۔ مسلم لیگ (ن) پر تنقید وقت کا ضیاع ہے لہٰذا پیپلز پارٹی تنقید کرنے اور عوام کے مسائل میں اضافہ کرنے کے بجائے عام آدمی کی فلاح و بہبود کے لئے اقدامات اٹھائے تو بہتر ہے۔ مشرف کی ڈکٹیٹر شپ نے ملک کو تباہ کیا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گذشتہ روز گوجرہ میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ نوازشریف نے کہا کہ اگر رکاوٹ نہ ڈالی جاتی تو پاکستان میں آج وہ سب کچھ ہوتا جس کا ہم ساٹھ سال سے خواب دیکھ رہے ہیں۔ چودھری ریاض کی والدہ کے انتقال پر اظہار افسوس کے بعد وہاں موجود ذرائع ابلاغ کے نمائندوں اور عوام سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جب پاکستان ایٹمی قوت بنا تو قوم نے جشن منایا۔ آج پاکستان دنیا کے سات ایٹمی ملکوں میں شامل ہے اللہ کرے کہ ہم اقتصادی ترقی میں بھی سب سے آگے ہوں۔ گوادر سے کراچی تک موٹروے بنانے کا پروگرام تھا اگر ایسا ہو جاتا تو آج ملک میں کتنی ترقی ہوتی درآمدات و برآمدات کو فروغ ملتا اور بے روزگاری کا نام نہ ہوتا۔ انہوں نے عوام سے کہا کہ وہ موازنہ کریں کہ ڈکٹیٹروں نے دس دس سال میں کیا کیا اگر پاکستان اپنی منزل کی طرف رواں دواں رہتا تو آج ایشیا اور دنیا کی بڑی طاقت بن چکا ہوتا۔ انہوں نے کہا کہ آج بلوچستان سے لے کر پنجاب تک سارا ملک دہشت گردی کی آگ میں جھلس رہا ہے‘ ہماری منتخب عوامی حکومت پر آمر کے جبری تسلط نے ملک کو تباہی کی طرف دھکیل دیا۔ عوام امریکی سفیر کے آر جی ایس ٹی پر بیان کو پاکستان کے معاملات میں مداخلت سمجھتے ہیں اور حکومت کو بھی چاہئے کہ وہ ملکی مفادات کا احترام کرے نہ کہ امریکی مفادات کا۔ آئی این پی کے مطابق نوازشریف تین سال بعد گوجر خان آئے اور چودھری ریاض کی والدہ کے روح کو ایصال ثواب کے لئے دعا کی۔