PDA

View Full Version : غلام



ابوسفیان
11-11-2012, 02:00 AM
غلام اس کو کہتے ہیں کہ جسے کسی اور انسان کی ملکیت میں لیا جائے۔ اس کا رواج قدیم زمانے سے ہے۔ امریکہ کی ترقی میں ان غلاموں کا بہت ہاتھ ہے جن کو گوروں نے افریقہ سے اغوا کر کے امریکہ پہنچایا تھا۔ تمام قدیم اقوام میں غلاموں کا رواج تھا۔ قدیم یونان و روم میں عورتیں غلاموں کے ساتھ مباشرت تک کرتی تھیں۔ فراعین مصر نے بھی غلاموں کے ذریعے اہرام کو تعمیر کیا۔ اسلام نے غلامی سے منع نہ کیا مگر ان کی آزادی کا بہت ثواب رکھا چنانچہ غلامی بہت کم ہو گئی۔

آج کل غلام کی اصطلاح وسیع معنی میں استعمال ہوتی ہے مثلاً کوئی ملک کسی دوسرے ملک کے زیرِ اثر ہو تو کہا جاتا ہے کہ وہ اس کا غلام ہے۔ جیسے سعودی عرب اور پاکستان امریکہ کے غلام کہلاتے ہیں۔ اس کے علاوہ لوگ جذبات کے غلام ہوتے ہیں۔ عاشق معنوی اعتبار سے معشوق کا غلام ہوتا ہے۔:vahidrk: