PDA

View Full Version : رضا و صبر کے جوہر دکھا رہے ہیں حسین



تا بی
12-10-2012, 12:44 AM
ستم گروں میں گھرے مسکرا رہے ہیں حسین

خدا کی راہ میں خود کو لٹا رہے ہیں حسین
وہ کربلا کی طرف بڑھتے جا رہے ہیں حسین


بہا کے لہو اپنا نینوا کے ذروں میں
زمیں کو عرش کا ہمسر بنا رہے ہیں حسین

نہ کیوں بپا ہو قیامت کا شور خیموں میں
کہ لاشے قاسم ، و اکبر کے لا رہے ہیں حسین

لرز نہ جائے بھلا کیوں زمیں مقتل کی
سر اپنا سجدہ حق میں کٹا رہے ہیں حسین

خیال آیا تھا انکا کہ دل ہوا روشن
نصیر سر تو اٹھاؤ وہ آ رہے ہیں حسین

شاہ نصیر الدین نصیر گیلانی رحمتہ الله علیہ

admin
12-10-2012, 02:07 AM
جزاک اللہ

تانیہ
12-10-2012, 11:18 AM
جزاک اللہ

pervaz khan
12-10-2012, 05:00 PM
جزاک اللہ