PDA

View Full Version : افراد کی ہلاکت کے بعد 3 شہروں میں ایمرجنسی، کرفیو نافذ



نذر حافی
01-29-2013, 12:42 AM
عالمی میڈیا کے مطابق مصر کے ساحلی شہر پورٹ سعید میں ہنگامہ آرائی کے بعد مصری صدر محمد مرسی نے اسکندریہ سمیت تین شہروں میں تیس دن کے لیے ایمرجنسی کے نفاذ کے ساتھ کرفیو کا اعلان کر دیا ہے۔ صدر محمد مرسی نے ہنگامہ آرائی کے چوتھے روز سرکاری ٹیلی ویژن پر قوم سے اپنے خطاب کے دوران یہ اعلان کیا۔ اسکندریہ کے فٹبال اسٹیڈیم سانحے میں ملوث اکیس ملزمان کی سزائے موت کیخلاف تاحال ہنگامے جاری ہیں۔ اب تک اننچاس افراد پرتشدد مظاہروں میں اپنی جانیں گنوا بیٹھے ہیں۔ گذشتہ روز بھی مصری دارالحکومت قاہرہ میں مظاہرین اور پولیس کے درمیان تصادم کے نتیجے میں کئی افراد زخمی ہوگئے۔ مظاہرین نے پولیس پر پتھراوٴ کیا، جس کے جواب میں پولیس نے مظاہرین پر آنسو گیس کے شیل برسائے، تاہم پولیس نے مظاہرین کو تحریر اسکوائر سے دور ہٹنے پر مجبور کر دیا۔ ہنگامہ آرائی کے پیش نظر امریکہ اور برطانیہ نے اپنے سفارتخانے بند کر دیئے۔
مصر میں ہونے والے ہنگاموں کے پیش نظر مختلف شہروں میں ایمرجنسی اور کرفیو نافذ کر دیا گیا۔ مصری صدر محمد مرسی نے مصر کے مختلف شہروں سوئز، اسماعلیہ اور پورٹ سعید میں ایک مہینے کے لئے ایمرجنسی نافذ کرنے کا اعلان کیا ہے، جبکہ پورٹ سعید میں مقامی وقت کے مطابق شام 9 بجے سے صبح 6 بجے تک کرفیو نافذ رہے گا۔ مصری صدر محمد مرسی نے اپوزیشن جماعتوں کو آج مذاکرات کی دعوت دے دی۔ مصر کے حالات کے پیش نظر صدر محمد مرسی نے ایتھوپیا کا دورہ منسوخ کر دیا، جہاں آج افریقی یونین کی کانفرنس شروع ہوئی۔ علاوہ ازیں صدر مرسی نے سوئزرلینڈ کے شہر ڈیووس میں جاری عالمی اقصادی فورم سے وزیر اعظم هشام قنديل کو بھی واپس بلا لیا ہے۔