PDA

View Full Version : آئینہ بن کر کبھی اُن کو بھی حیراں دیکھیے



ایم-ایم
11-30-2013, 04:40 PM
آئینہ بن کر کبھی اُن کو بھی حیراں دیکھیے
اپنے غم کو اُن کی صورت سے نمایاں دیکھیے

اس دیارِ چشم و لب میں دل کی یہ تنہائیاں
اِن بھرے شہروں میں بھی شامِ غریباں دیکھیے

عمر گزری دل کے بُجھنے کا تماشا کر چکے
کس نظر سے بام و در کا یہ چراغاں دیکھیے

دیکھیے اب کے برس کیا گُل کھِلاتی ہے بہار
کتنی شدّت سے مہکتا ہے گلستاں دیکھیے

اے منیر اِس انجمن میں چشمِ لیلیٰ کا خیال
سردیوں کی بارشوں میں برق لرزاں دیکھیے

تانیہ
11-30-2013, 09:47 PM
آئینہ بن کر کبھی اُن کو بھی حیراں دیکھیے
اپنے غم کو اُن کی صورت سے نمایاں دیکھیے

اس دیارِ چشم و لب میں دل کی یہ تنہائیاں
اِن بھرے شہروں میں بھی شامِ غریباں دیکھیے

عمر گزری دل کے بُجھنے کا تماشا کر چکے
کس نظر سے بام و در کا یہ چراغاں دیکھیے

دیکھیے اب کے برس کیا گُل کھِلاتی ہے بہار
کتنی شدّت سے مہکتا ہے گلستاں دیکھیے

اے منیر اِس انجمن میں چشمِ لیلیٰ کا خیال
سردیوں کی بارشوں میں برق لرزاں دیکھیے



واہ واہ ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔