PDA

View Full Version : چلو حسین (ع) سے پوچھیں کہ زندگی کیا ہے۔۔۔۔۔



aliimran
12-27-2013, 06:32 PM
چراغ زیست کے آگے یہ تیرگی کیا ہے
چلو حسین (ع) سے پوچھیں کہ زندگی کیا ہے

میرے وطن میں خزاؤں کا راج رہتا ہے
بہت عجیب یہاں کا مزاج رہتا ہے
بہارِ نو سے زمانے کو دشمنی کیا ہے
چلو حسین (ع) سے پوچھیں کہ زندگی کیا ہے

خدا کے نام پہ دنیا میں اک تماشا ہے
ہر ایک ہاتھ نے اپنے لئے تراشا ہے
سمجھ سکا نہ کوئی بھی کہ بندگی کیا ہے
چلو حسین (ع) سے پوچھیں کہ زندگی کیا ہے

مٹا رہے ہیں محبت کا فلسفہ دل سے
مسیحا سارے نظر آ رہے ہیں قاتل سے
دیارِ عشق میں نفرت کا کام ہی کیا ہے
چلو حسین (ع) سے پوچھیں کہ زندگی کیا ہے

aliimran
12-27-2013, 07:02 PM
شب حیات میں تاثیر روشنی کیا ہے
چلو حسین(ع) سے پوچھیں کہ زندگی کیا ہے

غم حسین(ع) ہے پہچان آدمیت کی
حسین(ع) ہی پہ نہ رویا تو آدمی کیا ہے

حبیب ابن مظاہر تمہارے صدقے میں
کهلا یہ کرب و بلا میں کہ دوستی کیا ہے

بس ایک مقتل شبیر(ع) کی زمین ہے جہاں
بجهے چراغ بتاتے ہیں روشنی کیا ہے

جو دشت یاس کا پیاسا ہے کیا خبر اس کو
قریب نہر مسافر کی تشنگی کیا ہے

بتا رہا ہے ریاست کو حر کا ٹهکرانا
کرے ضمیر ملامت تو نوکری کیا ہے

تلاش سجدہ حق میں ادهر ادهر نہ پهرو
جبین شاہ(ع) سے پوچهو کہ بندگی کیا ہے

بےباک
12-29-2013, 09:49 AM
درنوائے زندگی سوز ازحسین
اہل حق حریت آموز ازحسین
سیرت فرزندہا از امہات
جوہر صدق و صفا از امہات
مزرع تسلیم را حاصل بتول
مادراں را اسوہ کامل بتول

تانیہ
12-29-2013, 10:01 PM
تلاش سجدہ حق میں ادهر ادهر نہ پهرو
جبین شاہ(ع) سے پوچهو کہ بندگی کیا ہے
جزاک اللہ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔