PDA

View Full Version : نہ دید ہے نہ سخن، اب نہ حرف ہے نہ پیام



حبیب صادق
06-12-2014, 08:56 AM
نہ دید ہے نہ سخن، اب نہ حرف ہے نہ پیام

کوئی بھی حیلہ تسکین نہیں اور آس بہت ہے
اُمیدِ یار، نظر کا مزاج، درد کا رنگ

تم آج کچھ بھی نہ پُوچھو کہ دل اُداس بہت ہے

جاذبہ
06-12-2014, 01:25 PM
واہ واہ!!!! بہت خوب حضرت کیا کہنے