PDA

View Full Version : نصیب آزمانے کے دن آ رہے ہیں



جاذبہ
11-01-2014, 07:01 PM
نصیب آزمانے کے دن آ رہے ہیں
قریب ان کے آنے کے دن آ رہے ہیں

جو دل سے کہا ہے، جو دل سے سنا ہے
سب اُن کو سنانے کے دن آ رہے ہیں
ابھی سے دل و جاں سرِ راہ رکھ دو
کہ لٹنے لٹانے کے دن آ رہے ہیں
ٹپکنے لگی اُن نگاہوں سے مستی
نگاہیں چرانے کے دن آ رہے ہیں
صبا پھر ہمیں پوچھتی پھر رہی ہے
چمن کو سجانے کے دن آ رہے ہیں
چلو فیض پھر سے کہیں دل لگائیں
سنا ہے ٹھکانے کے دن آ رہے ہیں
:th_rose::th_rose::th_rose::th_rose::th_rose::th_r ose::th_rose::th_rose:

عبادت
11-02-2014, 03:49 AM
بہت خوب :smiley026:

نگار
11-04-2014, 06:51 PM
ٹپکنے لگی اُن نگاہوں سے مستی
نگاہیں چرانے کے دن آ رہے ہیں


زبردست
بہترین شاعری ارسال کرنے پہ آپ کا بہت بہت شکریہ