PDA

View Full Version : جدائی



عرفان
12-21-2010, 03:05 PM
http://www.picamatic.com/show/2008/06/03/05/380086_400x200.gif
اشک گرتے ہیں میری سانس سنبھل جاتی ہے
دے کر اک درد نیا شام نکل جاتی ہے
تجھ کو دیکھوں تو میرے درد کو ملتا ہے سکون
تجھ سے بچھڑوں تو میری جان نکل جاتی ہے
عشق کچھ ایسے مٹاتا ہے نشان ہستی
جیسے ہر رات اجالے کو نکل جاتی ہے
تو اگر دل پر میرے ہاتھ ہی رکھ دے عرفان
ٹوٹتی سانس بھی سنبھل جاتی ہے
زخم بھرتا ہی نہیں تیری جدائی کا مگر
پھر تیری یاد نیا درد اگل جاتی جاتی ہے



(عرفان)

علی عمران
12-21-2010, 03:17 PM
بہت خوب عرفان.............. کیا بات ہے.........

تانیہ
12-21-2010, 04:17 PM
بہت خوب

کا کا سپاہی
12-27-2010, 06:44 PM
بہت خوب

چیکو
12-27-2010, 07:43 PM
ناٰٰہس غزل ہے بہت شکریہ اتنی اچھی شاعری شیر کرنے کا کہ۔۔۔۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔عشق کچھ ایسے مٹاتا ہے نشان ہستی
جیسے ہر رات اجالے کو نکل جاتی ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

محمد عثمان کمبوہ
03-04-2011, 01:07 PM
غیروں کی جنگوں میں ہم نے
نسلوں کا ایندھن ڈالا ھے
وہ ہاتھ گریباں تک آئے
اِک عمر سے جن کو پالا ھے
...اب امن سے ہم کو رہنے دو
اب اور نہ لاشے ڈھوئیںگے
بارود کے ڈھیروں میں کب تک
ہم بھوک کی فصلیں بوئیںگے؟

این اے ناصر
03-18-2011, 08:27 PM
http://www.picamatic.com/show/2008/06/03/05/380086_400x200.gif
اشک گرتے ہیں میری سانس سنبھل جاتی ہے
دے کر اک درد نیا شام نکل جاتی ہے
تجھ کو دیکھوں تو میرے درد کو ملتا ہے سکون
تجھ سے بچھڑوں تو میری جان نکل جاتی ہے
عشق کچھ ایسے مٹاتا ہے نشان ہستی
جیسے ہر رات اجالے کو نکل جاتی ہے
تو اگر دل پر میرے ہاتھ ہی رکھ دے عرفان
ٹوٹتی سانس بھی سنبھل جاتی ہے
زخم بھرتا ہی نہیں تیری جدائی کا مگر
پھر تیری یاد نیا درد اگل جاتی جاتی ہے



(عرفان)




بہت پیاری شاعری ہے۔ تھینکس فارشیرنگ۔