نتائج کی نمائش 1 تا: 4 از: 4

موضوع: اورنگ زیب عالمگیر ۔مزدوری کرنے والا

  1. #1
    منتظم اعلی بےباک کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    پيغامات
    6,191
    شکریہ
    2,175
    1,249 پیغامات میں 1,624 اظہار تشکر

    اورنگ زیب عالمگیر ۔مزدوری کرنے والا

    ہم کو کمال حاصل ہے غم سے خوشیاں نچوڑ لیتے ہیں ۔
    اردو منظر ٰ معیاری بات چیت

  2. #2
    منتظم اعلی بےباک کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    پيغامات
    6,191
    شکریہ
    2,175
    1,249 پیغامات میں 1,624 اظہار تشکر

    جواب: اورنگ زیب عالمگیر ۔مزدوری کرنے والا

    اورنگ زیب ایسا حکمران تھا کہ راتوں کو بھیس بدل کے رعایا کی خبر گیری کرتا تھا،۔، اپنے ہاتھوں سے ٹوپیاں بناکر بیچتے اور اسکی کمائی کھاتے ،،عالمگیر کے استاد ملاں جیون ان سے ملنے آئے ، عالمگیر نے پوچھا استاد مکرم میرے مہمان بننا پسند کریں گے یا شاہی
    ملاں جیون رحمۃ اللہ نے فرمایا ھم تو آپکے مہمان ھیں رات کو روٹی کی باری آئی تو ایک روٹی خشک اور پانی پیش کیا اورکہا میری آج کی کمائی سے بس اتنا کچھ ھی مل سکا ۔

    ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

    اورنگ زیب عالمگیر بڑا مشہور مغل شہنشاہ گزرا ہے
    اس نے ہندوستان پر تقریباً 50 سال حکومت کی تھی۔

    ایک دفعہ ایک ایرانی شہزادہ اسے ملنے کے لئے آیا۔
    بادشاہ نے اسے رات کو سلانے کا بندوبست اس کمرے میں کرایا
    جو اس کی اپنی خوابگاہ سے منسلک تھا۔

    ان دونوں کمروں کے باہر بادشاہ کا ایک بہت مقرب حبشی خدمت گزار ڈیوٹی پر تھا۔
    اس کا نام "محمد حسن" تھا۔
    اور بادشاہ اسے ہمیشہ "محمد حسن" ہی کہا کرتا تھا۔

    اس رات نصف شب کے بعد بادشاہ نے آواز دی’’حسن! ‘‘۔
    نوکر نے لبیک کہا اور ایک لوٹا پانی سے بھرکر بادشاہ کے پاس رکھا
    اور خود واپس باہر آگیا۔ ایرانی شہزادہ بادشاہ کی آواز سن کر بیدار ہوگیا تھا
    اور اس نے نوکر کو پانی کا لوٹا لیے ہوئے بادشاہ کے کمرے میں جاتے دیکھا
    اور یہ بھی دیکھا کہ نوکر لوٹا اندر رکھ کر باہر واپس آگیا ہے۔
    اسے کچھ فکر لاحق ہوگئی کہ بادشاہ نے تو نوکر کو آواز دی تھی
    اور نوکر پانی کا لوٹا اس کے پاس رکھ کر واپس چلا گیا ہے۔ یہ کیا بات ہے؟

    صبح ہوئی شہزادے نے محمد حسن سے پوچھا کہ رات والا کیا معاملہ ہے؟
    مجھے تو خطرہ تھا کہ بادشاہ دن نکلنے پر تمہیں قتل کرا دے گا
    کیونکہ تم نے بادشاہ کے کسی حکم کا انتظار کرنے کے بجائے لوٹا پانی سے بھر کر رکھ دیا اور خود چلے گئے۔

    نوکر نے کہا:’’عالی جاہ !ہمارے بادشاہ حضوراکرمۖ کا اسم گرامی بغیر وضو نہیں لیتے۔
    جب انہوں نے مجھے حسن کہہ کر پکارا تو میں سمجھ گیا کہ ان کا وضو نہیں ہے ورنہ یہ مجھے ’’محمد حسن‘‘ کہہ کر پکارتے اس لیے میں نے پانی کا لوٹا رکھ دیا تاکہ وہ وضو کر لیں.
    ہم کو کمال حاصل ہے غم سے خوشیاں نچوڑ لیتے ہیں ۔
    اردو منظر ٰ معیاری بات چیت

  3. #3
    منتظم اعلی بےباک کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    پيغامات
    6,191
    شکریہ
    2,175
    1,249 پیغامات میں 1,624 اظہار تشکر

    جواب: اورنگ زیب عالمگیر ۔مزدوری کرنے والا

    ابوالمظفرمحی الدین محمد اورنگزیب عالمگیر مغلیہ خاندان کا چھٹا بادشاہ تھا۔3نومبر 1618 عیسوی کو مالوہ کی سرحد پر پیدا ہوا ۔ عالم گیر کا خطاب والد شاہجان نے دیا ۔اورنگزیب کی والدہ ارجمند بانو تھیں جو ممتازمحل کے نام سے مشہور تھیں۔اورنگزیب کو سیدمحمد،میر ہاشم اور ملا صالح جیسے علام کی شاگردی کا موقعہ ملا ۔مغل بادشاہوں میں اورنگزیب پہلا بادشاہ تھا جس نے قرآن شریف حفظ کیا اور فارسی مضمون نویسی میں نام پیدا کیا۔اس کے علاوہ گھڑ سواری تیر اندازی اور فنون سپہ گری میں بھی کمال حاصل کیا ۔سترہ برس کی عمر میں 1636 کو دکن کا صوبیدار مقرر ہوا ۔ اس دوران اس نے کئی بغاوتوں کو فرو کیا اور چند نئے علاقے فتح کیے،بلغ کے ازبکوں کی سرکوبی جس جوانمردی سے کی اس کی مثال تاریخ عالم میں مشکل سے ملے گی۔
    ہم کو کمال حاصل ہے غم سے خوشیاں نچوڑ لیتے ہیں ۔
    اردو منظر ٰ معیاری بات چیت

  4. #4
    رکنِ خاص ابوسفیان کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Apr 2012
    پيغامات
    426
    شکریہ
    94
    14 پیغامات میں 19 اظہار تشکر

    جواب: اورنگ زیب عالمگیر ۔مزدوری کرنے والا

    پھر حکومت کس طرح چلتی ہوگی باد شاہ تو مزدوری میں لگا رہتا ہوگا مجھے تو جناب ایسی باتیں ہضم نہیں ہوتیں ۔۔!!

    رَّبِّ زِدْنِي عِلْمًا
    O my Lord! advance me in knowledge.

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University