نتائج کی نمائش 1 تا: 5 از: 5

موضوع: میں مر مٹا تو وہ سمجھا یہ انتہا تھی مری

  1. #1
    ناظم خاص تانیہ کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    مقام
    گجرات
    پيغامات
    7,867
    شکریہ
    949
    880 پیغامات میں 1,107 اظہار تشکر

    میں مر مٹا تو وہ سمجھا یہ انتہا تھی مری

    میں مر مٹا تو وہ سمجھا یہ انتہا تھی مری
    اسے خبر ہی نہ تھی خاک کیمیا تھی مری
    میں چپ ہوا تو وہ سمجھا کہ بات ختم ہوئی
    پھر اس کے بعد تو آواز جابجا تھی مری
    جو طعنہ زن تھا مری پوشش دریدہ پر
    اسی کے دوش رکھی ہوئی قبا تھی مری
    میں اس کو یاد کروں بھی تو یاد آتا نہیں
    میں اس کو بھول گیا ہوں یہی سزا تھی مری
    شکست دے گیا اپنا غرور ہی اس کو
    وگرنہ اس کے مقابل بساط کیا تھی مری
    کہیں دماغ کہیں دل کہیں بدن ہی بدن
    ہر اک سے دوستی یاری جدا جدا تھی مری
    کوئی بھی کوئے محبت سے پھر نہیں گزرا
    تو شہر عشق میں کیا آخری صدا تھی مری
    جو اب گھمنڈ سے سر کو اٹھائے پھرتا ہے
    اسی طرح کی تو مخلوق خاک پا تھی مری
    ہر اک شعر نہ تھا درخور قصیدہ دوست
    اور اس سے طبع رواں خوب آشنا تھی مری
    میں اسکو دیکھتا رہتا تھا حیرتوں سے فراز
    یہ زندگی سے تعارف کی ابتدا تھی مری
    شاعر احمد فراز

  2. #2
    ناظم
    تاريخ شموليت
    Feb 2011
    پيغامات
    3,081
    شکریہ
    21
    91 پیغامات میں 134 اظہار تشکر

    RE: میں مر مٹا تو وہ سمجھا یہ انتہا تھی مری

    واہ بہت خوب ۔ شکریہ

  3. #3
    ناظم سیما کا اوتار
    تاريخ شموليت
    May 2011
    پيغامات
    2,514
    شکریہ
    409
    125 پیغامات میں 159 اظہار تشکر

    RE: میں مر مٹا تو وہ سمجھا یہ انتہا تھی مری

    بہت خوب شکریہ

  4. #4
    منتظم اعلی بےباک کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    پيغامات
    6,140
    شکریہ
    2,103
    1,216 پیغامات میں 1,588 اظہار تشکر

    RE: میں مر مٹا تو وہ سمجھا یہ انتہا تھی مری

    بہت خوب ، زبردست نظم احمد فراز کی شئیر کی ،
    شاندار

  5. #5
    رکنِ خاص نگار کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Dec 2011
    پيغامات
    5,360
    شکریہ
    663
    357 پیغامات میں 424 اظہار تشکر

    RE: میں مر مٹا تو وہ سمجھا یہ انتہا تھی مری

    بہت خوب تانیہ سسٹر شکریہ

متشابہہ موضوعات

  1. ہم تو اسیرِ خواب تھے تعبیر جو بھی تھی
    By خان بلوچا in forum متفرق شاعری
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 03-03-2013, 08:42 PM
  2. میں مرمٹا تو وہ سمجھا یہ انتہا تھی مری
    By ایم-ایم in forum احمد فراز
    جوابات: 2
    آخری پيغام: 04-16-2012, 10:21 AM
  3. اُلجھن تمام عُمر یہ تارِ نفس میں تھی
    By تانیہ in forum متفرق شاعری
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 04-03-2012, 09:49 AM
  4. تھی جس سے روشنی ، وہ دیا بھی نہیں رہا
    By تانیہ in forum متفرق شاعری
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 04-02-2012, 09:39 AM
  5. منزلیں بھی اس کی تھی
    By اذان in forum میری پسندیدہ شاعری
    جوابات: 5
    آخری پيغام: 03-31-2012, 01:07 PM

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University