نتائج کی نمائش 1 تا: 3 از: 3

موضوع: زمین پر گھونسلا بنانے والا برفانی الّو

  1. #1
    رکنِ خاص
    تاريخ شموليت
    Jun 2014
    پيغامات
    2,399
    شکریہ
    640
    700 پیغامات میں 726 اظہار تشکر

    زمین پر گھونسلا بنانے والا برفانی الّو

    زمین پر گھونسلا بنانے والا برفانی الّو


    وردہ بلوچ

    رات کے وقت نکلنے والے الّو کو دیکھنا مشکل ہوتا ہے لیکن اس کی نرالی آواز موجودگی کی خبر دے دیتی ہے۔ شہروں کے بڑھنے اور درختوں کے کٹنے سے اب کثیر آبادی ان کی آواز سننے سے بھی قاصر ہے۔ ہمارے ہاں پائے جانے والے الّووں میں سرمئی اور بھورا رنگ غالب ہوتے ہیں۔ البتہ کرۂ ارض کے زیادہ تر شمالی حصے میں ایک ایسا الّو پایا جاتا ہے جس پر سفید رنگ کا غلبہ ہوتا ہے۔ اسے برفانی الو (snowy owl) کہا جاتا ہے۔ برفانی الّو شمالی امریکا اور یوروایشیا کے قطبی علاقوں میں پائے جاتے ہیں۔ نر تقریباً سارے کے سارے سفید ہوتے ہیں، جبکہ مادہ پر سیاہ داغ ہوتے ہیں۔ جب بچے چھوٹے ہوتے ہیں تو ان کے پَروں کا رنگ زیادہ تر سیاہ ہوتا ہے لیکن وقت کے ساتھ سفید ہوتا جاتا ہے۔ برفانی الوّ زمین پر اپنا گھونسلا بناتے ہیں۔ زیادہ تر اقسام کے الّو دن کے وقت سوتے اور رات کے وقت شکار کرتے ہیں لیکن برفانی الّو دن کے وقت سرگرم ہوتے ہیں، خصوصاً گرما میں۔ ان کی آنکھیں زرد اور چونچ سیاہ ہوتی ہے۔ ان کی لمبائی 20 سے 28 انچ ہوتی ہے اور پروں کے ساتھ ان کا پھیلاؤ 49 سے 59 انچ ہوتا ہے۔ ان کا وزن 1.6 سے تین کلوگرام ہوتا ہے اور اوسط عمر 10 برس ہوتی ہے۔ برفانی الّو، الّوؤں کی جسیم اقسام میں شمار ہوتے ہیں۔ برفانی الّو مختلف طرح کی آوازیں نکالتے ہیں۔ یہ خبردار کرتے ہوئے گرج کر ’’کرک کرک‘‘ کی آواز نکالتے ہیں۔ مادہ ’’پا ای، پا ای‘‘ یا ’’پرک پرک‘‘ کی نرم آواز بھی نکالتی ہے۔ یہ پرندہ شکار کی تلاش میں ہجرت کرتا رہتا ہے۔ آرام کرتے ہوئے برفانی الّو کا منہ عام طور پر سورج کی طرف ہوتا ہے جس کا سبب واضح طور پر معلوم نہیں ہو سکا۔ برفانی الّو اپنا گھونسلا ایسی جگہ پر بناتے ہیں جہاں سے دور تک دیکھنا آسان ہو، برف کم ہو اور شکار بھی قریب ہو۔ اس مقصد کے لیے عقابوں کے ترک کیے گئے گھونسلے بھی استعمال میں لاتے ہیں۔ بریڈنگ کا موسم مئی سے جون تک ہے۔ مادہ تین سے 11 انڈے دیتی ہے جو ایک دن کے وقفے کے بعد کئی دنوں تک دیے جاتے ہیں۔ پانچ ہفتوں بعد انڈوں سے بچے نکلتے ہیں۔ نر اور مادہ دونوں مل کر اپنے گھونسلے اور بچوں کی حفاظت کرتے ہیں۔ اگرچہ بچوں کے سائز میں فرق ہو سکتا ہے لیکن ان میں جھگڑا کم ہی ہوتا ہے۔ بعض بچے پیدائشی علاقے میں رہ جاتے ہیں جبکہ باقی ہجرت کر جاتے ہیں۔ بہت سے چھوٹے جانور ان کا شکار بنتے ہیں۔ ان میں میملز بھی شامل ہیں۔ ان کی خوراک بننے والوں میں ہارنس، گلہری، خرگوش اور چوہوں کے علاوہ مختلف اقسام کے پرندے شامل ہیں۔ یہ عام طور پر شکار کا انتظار کرتے ہیں اور زمین اور فضا دونوں جگہ اسے پکڑتے ہیں۔ اس کے علاوہ پانی کی بالائی سطح سے یہ مچھلیاں بھی پکڑ لیتے ہیں۔ یہ کبھی کبھار مردار بھی کھاتے ہیں۔برفانی الّو اپنے چھوٹے شکار کو پورا نگل جاتے ہیں۔ ان کا معدہ بہت طاقت ور ہوتا ہے اور اس میں پائے جانے والے اجزا گوشت کو گلا دیتے ہیں۔ بڑا شکار ٹکڑوں کی صورت میں نگلا جاتا ہے۔ برفانی الّوؤں کا مقابلہ برفانی لومٹری، ایک مقامی کوے نما پرندے، کتے اور خاکستری بھیڑیے سے ہوتا رہتا ہے۔ انڈوں پر بیٹھی مادہ کی رکھوالی گھونسلے کے نزدیک موجود نر کرتا رہتا ہے اور اگر کوئی شکاری نزدیک آئے تو نر اور مادہ دونوں حملہ آور ہو جاتے ہیں۔ وہ غوطے لگا کر حملے کرتے ہیں اور دور بھگانے کے مختلف جتن کرتے ہیں۔


  2. اس مفید مراسلے کے لئے درج ذیل رُکن نے حبیب صادق کا شکریہ ادا کیا:

    Maria (01-06-2020)

  3. #2
    رکنِ خاص
    تاريخ شموليت
    Oct 2019
    پيغامات
    566
    شکریہ
    598
    441 پیغامات میں 445 اظہار تشکر

    جواب: زمین پر گھونسلا بنانے والا برفانی الّو

    اہم اور مفید معلومات شیئر کرنے کا شکریہ

  4. اس مفید مراسلے کے لئے درج ذیل رُکن نے Maria کا شکریہ ادا کیا:

    حبیب صادق (01-07-2020)

  5. #3
    رکنِ خاص
    تاريخ شموليت
    Jun 2014
    پيغامات
    2,399
    شکریہ
    640
    700 پیغامات میں 726 اظہار تشکر

    جواب: زمین پر گھونسلا بنانے والا برفانی الّو

    پسند اور جواب کا شکریہ

اس موضوع کے کلیدی الفاظ (ٹیگز)

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University