نتائج کی نمائش 1 تا: 2 از: 2

موضوع: جانے یہ کیسی تیرے ہجر میں ٹھانی دل نے

  1. #1
    ناظم خاص تانیہ کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    مقام
    گجرات
    پيغامات
    7,877
    شکریہ
    952
    881 پیغامات میں 1,108 اظہار تشکر

    جانے یہ کیسی تیرے ہجر میں ٹھانی دل نے

    جانے یہ کیسی تیرے ہجر میں ٹھانی دل نے
    پھر کسی اور کی کچھ بات نہ مانی دل نے
    ایک وحشت سے کسی دوسری وحشت کی طرف
    اب کے پھر کی ہے کوئی نقل مکانی دل نے
    اب بھی نوحے ہیں جدائی کے وہی ماتم ہے
    ترک کب کی ہے کوئی رسم پرانی دل نے
    بات بے بات جو بھر آتی ہیں آنکھیں اپنی
    یاد رکھی ہے کسی دکھ کی کہانی دل نے
    ڈوبتی شام کے ویران سمے کی صورت
    تھام رکھی ہے تیری ایک نشانی دل نے
    شاعر عدیم ہاشمی

  2. #2
    ناظم
    تاريخ شموليت
    Feb 2011
    پيغامات
    3,081
    شکریہ
    21
    91 پیغامات میں 134 اظہار تشکر

    RE: جانے یہ کیسی تیرے ہجر میں ٹھانی دل نے

    واہ بہت خوب۔ شئیرنگ کاشکریہ۔

متشابہہ موضوعات

  1. جوابات: 6
    آخری پيغام: 05-26-2012, 01:45 AM
  2. چلی ہے شہر میں کیسی ہوا اداسی کی
    By ایم-ایم in forum احمد فراز
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 04-16-2012, 10:31 AM
  3. میں تو لفظ لفظ تیری تیری ذات ہوں
    By عرفان in forum متفرق شاعری
    جوابات: 2
    آخری پيغام: 04-03-2012, 01:03 PM
  4. تیرگی ایسی کہ روشن کر گئی آنکھیں غزل
    By سیدہ سارا غزل in forum میری شاعری
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 03-06-2012, 09:00 PM
  5. آو ، ہاتھ اٹھائیں ۔۔۔ مانگیں اپنے رب سے
    By بےباک in forum متفرق شاعری
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 01-09-2012, 05:33 AM

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University