نتائج کی نمائش 1 تا: 4 از: 4

موضوع: آہٹ سی کوئی آئے تو لگتا ہے کہ تم ہو

  1. #1
    ناظم خاص تانیہ کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    مقام
    گجرات
    پيغامات
    7,870
    شکریہ
    949
    880 پیغامات میں 1,107 اظہار تشکر

    آہٹ سی کوئی آئے تو لگتا ہے کہ تم ہو

    آہٹ سی کوئی آئے تو لگتا ہے کہ تم ہو
    سایہ کوئی لہرائے تو لگتا ہے کہ تم ہو
    جب شاخ کوئی ہاتھ لگاتے ہی چمن میں
    شرمائے لچک جائے تو لگتا ھے کہ تم ہو
    صندل سے مہکتی ہوئی پرکیف ہوا کا
    جھونکا کوئی ٹکرائے تو لگتا ہے کہ تم ہو
    اوڑھے ہوئے تاروں کی چمکتی ہوئی چادر
    ندی کوئی بل کھائے تو لگتا ھے کہ تم ہو
    جب رات گئے کوئی کرن میرے برابر
    چپ چاپ سے سو جائے تو لگتا ہے کہ تم ہو
    شاعر جاں نثار اختر

  2. #2
    مبتدی
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    پيغامات
    20
    شکریہ
    0
    0 پیغامات میں 0 اظہار تشکر

    RE: آہٹ سی کوئی آئے تو لگتا ہے کہ تم ہو

    واہ۔۔۔بہت خوب

  3. #3
    ناظم
    تاريخ شموليت
    Feb 2011
    پيغامات
    3,081
    شکریہ
    21
    91 پیغامات میں 134 اظہار تشکر

    RE: آہٹ سی کوئی آئے تو لگتا ہے کہ تم ہو

    واہ بہت خوب ۔ شئیرنگ کا شکریہ

  4. #4
    رکنِ خاص نگار کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Dec 2011
    پيغامات
    5,360
    شکریہ
    663
    357 پیغامات میں 424 اظہار تشکر

    RE: آہٹ سی کوئی آئے تو لگتا ہے کہ تم ہو

    واہ کیا بات ہے بہت شکریہ تانیہ سسٹر

متشابہہ موضوعات

  1. دیکھ لینا کہ کسی دُکھ کی کہانی تو نہیں
    By مٹھے کریلے in forum فرحت عباس شاہ
    جوابات: 2
    آخری پيغام: 01-25-2013, 10:56 PM
  2. میری طرح، کسی کو تو اپنا بنا کے دیکھ
    By ایم-ایم in forum احمد ندیم قاسمی
    جوابات: 2
    آخری پيغام: 04-17-2012, 08:01 PM
  3. جوابات: 4
    آخری پيغام: 04-12-2012, 09:09 PM
  4. جوابات: 3
    آخری پيغام: 04-21-2011, 06:37 PM
  5. جس وقت رب کو پاوّ تو بس اُسی کے ہو جاوّ
    By گلاب خان in forum قلم و کالم
    جوابات: 0
    آخری پيغام: 12-02-2010, 10:27 PM

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University