نتائج کی نمائش 1 تا: 3 از: 3

موضوع: کیوں طبیعت کہیں ٹھہرتی نہیں

  1. #1
    رکنِ خاص
    تاريخ شموليت
    Nov 2011
    پيغامات
    527
    شکریہ
    31
    49 پیغامات میں 71 اظہار تشکر

    کیوں طبیعت کہیں ٹھہرتی نہیں

    [size=x-large][align=center]کیوں طبیعت کہیں ٹھہرتی نہیں
    دوستی تو اداس کرتی نہیں

    ہم ہمیشہ کے سیر چشم سہی
    تجھ کو دیکھیں تو آنکھ بھرتی نہیں

    شبِ ہجراں بھی روزِ بد کی طرح
    کٹ تو جاتی ہے پر گزرتی نہیں

    شعر بھی آیتوں سے کیا کم ہیں
    ہم پہ مانا وحی اترتی نہیں

    اس کی رحمت کا کیا حساب کریں
    بس ہمیں سے حساب کرتی نہیں

    یہ محبت ہے ، سن! زمانے سن!
    اتنی آسانیوں سے مرتی نہیں

    جس طرح تم گزرتے ہو فراز
    زندگی اس طرح گزرتی نہیں
    [/align][/size]

  2. #2
    منتظم اعلی بےباک کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    پيغامات
    6,138
    شکریہ
    2,101
    1,212 پیغامات میں 1,584 اظہار تشکر

    RE: کیوں طبیعت کہیں ٹھہرتی نہیں

    [align=center]
    یہ محبت ہے ، سن! زمانے سن!
    اتنی آسانیوں سے مرتی نہیں

    جس طرح تم گزرتے ہو فراز
    زندگی اس طرح گزرتی نہیں
    [/align]

    بہت خوب ، زبردست

  3. #3
    ناظم
    تاريخ شموليت
    Feb 2011
    پيغامات
    3,081
    شکریہ
    21
    91 پیغامات میں 134 اظہار تشکر

    RE: کیوں طبیعت کہیں ٹھہرتی نہیں

    واہ بہت خوب جناب ۔ شئیرنگ کاشکریہ۔

متشابہہ موضوعات

  1. جوابات: 3
    آخری پيغام: 02-03-2013, 03:00 PM
  2. ہیں لبریز آہوں سے ٹھنڈی ہوائیں
    By ایم-ایم in forum فیض احمد فیض
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 04-16-2012, 10:46 AM
  3. جوابات: 1
    آخری پيغام: 04-13-2012, 06:41 PM
  4. یوں دل میں تیری یاد اتر آتی ہے جیسے
    By تانیہ in forum متفرق شاعری
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 04-03-2012, 10:01 AM
  5. عجب اک شان سے دربار حق میں سرخرو ٹھہرے
    By تا بی in forum میری پسندیدہ شاعری
    جوابات: 1
    آخری پيغام: 02-13-2012, 02:28 PM

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University