سن لیا ہم نے فیصلہ تیرا
اور سنکر اداس ہو بیٹھے
ذہن چپ چاپ آنکھ خالی ہے
جیسے ہم کائنات کھو بیٹھے
۔۔۔۔
دل کا باتوں کا مطلب نہ پوچھو
کچھ اور ہم بس اب سے نہ پوچھو
۔۔۔۔
تمام عمر اسی کے خیال میں گزری فراز
میرا خیال جسے عمر بھر نہیں آیا