نتائج کی نمائش 1 تا: 2 از: 2

موضوع: آج اشک میرے نعت سنائیں تو عجب کیا

  1. #1
    ناظم خاص تانیہ کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    مقام
    گجرات
    پيغامات
    7,862
    شکریہ
    949
    878 پیغامات میں 1,104 اظہار تشکر

    آج اشک میرے نعت سنائیں تو عجب کیا

    • آج اشک میرے نعت سنائیں تو عجب کیا
      سن کر وہ مجھے پاس بلائیں تو عجب کیا

      آج اشک میرے نعت سنائیں تو عجب کیا
      سن کر وہ مجھے پاس بلائیں تو عجب کیا

      دیدار کے قابل تو نہیں چشم تمنا
      لیکن وہ کبھی خواب میں آئیں تو عجب کیا

      ان پر تو گنہگار کا سب حال کھلا ہے
      اس پر بھی وہ دامن میں چھپائیں تو عجب کیا

      نہ زاد سفر ہے نہ کوئی کام بھلے ہیں
      پھر بھی ہمیں سرکار بلائیں تو عجب کیا

      میں ایسا خطاوار ہوں کچھ حد نہیں جس کی
      پھر بھی میرے عیبوں کو چھپائیں تو عجب کیا

      منہ ڈھانپ کے رکھنا کے گنہگار بہت ہوں
      میت میری دیکھنے آئیں تو عجب کیا

      نہ زاد سفر ہے نہ کوئی کام بھلے ہیں
      پھر بھی ہمیں سرکار بلائیں تو عجب کیا

      وہ حسن دوعالم ہیں ادیب ان کے قدم سے
      صحرا میں اگر پھول کھلائیں تو عجب کیا






  2. #2
    رکنِ خاص saba کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Jan 2014
    پيغامات
    345
    شکریہ
    96
    195 پیغامات میں 272 اظہار تشکر

    جواب: آج اشک میرے نعت سنائیں تو عجب کیا

    جزاک اللہ

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University