نتائج کی نمائش 1 تا: 2 از: 2

موضوع: رشتۂ خیال

  1. #1
    رکنِ خاص
    تاريخ شموليت
    Jun 2014
    پيغامات
    735
    شکریہ
    171
    123 پیغامات میں 141 اظہار تشکر

    رشتۂ خیال





    کبھی کسی بام کے کنارے

    اُگے ہوئے پیڑ کے سہارے
    مجھے ملی وہ مست آنکھیں
    جو دل کے پاتال میں اتر کر
    گئے دنوں کی گپھا میں جھانکیں


    کبھی کسی اجنبی نگر میں
    کسی اکیلے، اداس گھر میں
    پری رخوں کی حسیں سبھا میں
    کسی بہارِ گریز پا میں
    کسی سرِ رہ، کبھی سرِ کو
    کبھی پسِ در، کبھی لبِ جو
    مجھے ملی ہیں وہی نگاہیں
    جو ایک لمحے کی دوستی میں
    ہزار باتوں کو کہنا چاہیں

    ٭٭٭




  2. اس مفید مراسلے کے لئے درج ذیل رُکن نے حبیب صادق کا شکریہ ادا کیا:

    جاذبہ (06-10-2014)

  3. #2
    منتظم اعلی بےباک کا اوتار
    تاريخ شموليت
    Nov 2010
    پيغامات
    6,161
    شکریہ
    2,126
    1,234 پیغامات میں 1,606 اظہار تشکر

    جواب: رشتۂ خیال


    کبھی کسی اجنبی نگر میں
    کسی اکیلے، اداس گھر میں
    پری رخوں کی حسیں سبھا میں
    کسی بہارِ گریز پا میں
    کسی سرِ رہ، کبھی سرِ کو
    کبھی پسِ در، کبھی لبِ جو
    مجھے ملی ہیں وہی نگاہیں
    جو ایک لمحے کی دوستی میں
    ہزار باتوں کو کہنا چاہیں
    جو ایک لمحے کی دوستی میں،،،،،،،،،،،،،،،،،،،،،، ،،،،،، ہزار باتوں کو کہنا چاہیں ،
    اچھی شاعری ہے دل میں اترنے والی
    آپ کی چوائس ماشاءاللہ اچھی ہے
    ہم کو کمال حاصل ہے غم سے خوشیاں نچوڑ لیتے ہیں ۔
    اردو منظر ٰ معیاری بات چیت

  4. اس مفید مراسلے کے لئے درج ذیل رُکن نے بےباک کا شکریہ ادا کیا:

    حبیب صادق (06-11-2014)

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University