تو نے تو پڑھی ہی نہیں تاریخ رجل کی
جو مرد ہے وہ موت کی خبروں سے لڑا ہے

روضے پہ یہ حملہ بھی عجب تو نہیں شوکت
بزدل کی جبلت ہے وہ قبروں سے لڑا ہے