نتائج کی نمائش 1 تا: 2 از: 2

موضوع: غزل

  1. #1
    مبتدی
    تاريخ شموليت
    May 2014
    مقام
    سلانوالی/سرگودھا....دمام/سعودی عرب
    پيغامات
    18
    شکریہ
    0
    16 پیغامات میں 32 اظہار تشکر

    غزل

    وہ مردِ باصفا جو آبرو رکھے نگاہ کی
    کبھی کرے نہ آرزو کہیں کسی گناہ کی

    حرم میں بھی نہ دل لگے جو مردِ باصفا کا اب
    خطا نہیں یہ دل کی، سو یہ بات صرف چاہ کی

    بتوں کو بھول کر نہ محو ہو خدا کےعشق میں
    تو دل پہ کیوں ہو کارگر یہ ضرب لا الہ کی

    نجانےکیوں مجھےتو اس بشر سےخوف آتا ہے
    کبھی کرے نہ آرزو خدا سے جو پناہ کی

    خشّیتِ الاہی سے اگرچہ دل ہے کانپتا
    نجانے پھر بھی آدمی کو لت پڑی گناہ کی

  2. #2
    مبتدی
    تاريخ شموليت
    Dec 2015
    پيغامات
    5
    شکریہ
    0
    4 پیغامات میں 7 اظہار تشکر

    جواب: غزل

    بہت خوب واااااہ

آپ کے اختيارات بسلسلہ ترسيل پيغامات

  • آپ نئے موضوعات پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ جوابات نہیں پوسٹ کر سکتے ہیں
  • آپ اٹیچمنٹ پوسٹ نہیں کر سکتے ہیں
  • آپ اپنے پیغامات مدون نہیں کر سکتے ہیں
  •  
Cultural Forum | Study at Malaysian University